Thursday, May 19, 2022  | 1443  شوّال  17

گوادر کو حق دو تحریک: جلسےمیں سینکڑوں خواتین کی شرکت

SAMAA | - Posted: Dec 14, 2021 | Last Updated: 5 months ago
SAMAA |
Posted: Dec 14, 2021 | Last Updated: 5 months ago
[caption id="attachment_2464484" align="alignnone" width="800"] فوٹو: مولانا ہدایت الرحمان/ٹیوٹر[/caption]

گوادر کو حق دو تحریک کے لیے منعقد کیے گئے جلسے ميں گزشتہ روز سينکڑوں خواتين نے شرکت کی۔

مچھلی کے غیرقانونی شکار کے خلاف موسیٰ موڑ گراؤنڈ میں خواتین کے جلسے سے خطاب ميں مقررين نے کہا کہ غیرقانونی فشنگ کے باعث ماہی گیروں کے گھروں میں فاقے ہیں۔

جماعت اسلامی کی جانب سے گوادر ميں حق دو تحريک کا دھرنا 30 ويں روز بھی جاری ہے، مظاہرین نے مطالبات پر عمل درآمد تک دھرنا ختم نہ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

وزیراعظم کے نوٹس کے بعد چیف سیکریٹری بلوچستان مظہر نیاز گوادر پہنچے اور اعلیٰ سطح کے اجلاس کی صدارت کے دوران غیرقانونی فشنگ، بارڈر ٹریڈنگ اور چیک پوسٹ سمیت دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا۔

مظاہرين سے يکجہتی کے لیے جماعت اسلامی اور پيپلز پارٹی کا وفد آج گوادر پہنچے گا۔ جماعت اسلامی کے وفد میں ڈاکٹر معراج الہدیٰ صديقی، حافظ نعيم الرحمان اور ايم پی اے عبدالرشيد کی قیادت ميں گوادر پہنچے گا اور مظاہرين سے يکجہتی کا اظہار کرے گا۔

سابق صدر آصف علی زرداری اور چئیرمین پی پی بلاول بھٹو زرداری کی ہدایت پر پيپلزپارٹی کا وفد گوادر پہنچے گا۔ وفد بلوچستان کو حق دو تحریک کے سربراہ مولانا ہدایت الرحمن سے اظہار یکجہتی کرے گا۔

وفد میں نئیر حسین بخاری، فرحت اللہ بابر، مرکزی رہنما سید خورشید احمد شاہ، پی پی بلوچستان کے صدر میر چنگیز خان جمالی، سندھ کے صوبائی وزیر سعید غنی اور رکن قومی اسمبلی عبدالقادر پٹیل شامل ہوں گے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube