Tuesday, May 17, 2022  | 1443  شوّال  16

کراچی:علیزہ آرکیڈکی چوتھی منزل گرا کر13 جنوری کورپورٹ دینےکاحکم

SAMAA | - Posted: Dec 9, 2021 | Last Updated: 5 months ago
SAMAA |
Posted: Dec 9, 2021 | Last Updated: 5 months ago

سندھ ہائیکورٹ نے کراچی کےعلاقے گلشن اقبال میں علیزہ آرکیڈ کی چوتھی منزل مسمار کرکے 13 جنوری کو رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا ہے۔

جمعرات کو سندھ ہائی کورٹ میں غیرقانونی تعمیرات کے کیس کی سماعت ہوئی۔ درخواست گزار نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ گراؤنڈ پلس تھری کی اجازت تھی اور بلڈر نے ایک اضافی فلور تعمیرکرلیا۔

 عدالت نے  گلشن اقبال کے علیزہ آرکیڈ کی چوتھی منزل مسمار نہ کرنے پر برہمی کا اظہار کیا۔

جسٹس ظفرراجپوت نے ریمارکس دئیے کہ غیر قانونی تعمیرات کرکے پورے شہر کو تباہی کے دہانے پر لاکھڑا کیا ہے،کل کراچی میں 4.1 کی شدت کا زلزلہ آیا تو پورا شہر ہل گیا تھا، اگر 6.2 کی شدت  کا زلزلہ آگیا تو تباہی ہوگی۔ جسٹس ظفر راجپوت نے بلڈر سے عدالت میں پیش نہ ہونے پر استفسار کیا تو بلڈر نے جواب دیا کہ ایڈریس تبدیل ہونے کی وجہ سے کورٹ نوٹس نہیں مل سکا۔ اس پر جسٹس ظفر راجپوت نے ریمارکس دئیے کہ  آپ مسلسل جھوٹ بول رہے ہیں اور یہیں سے جیل بھیج دیں گے۔

عدالت نےعلیزہ آرکیڈ کی چوتھی منزل مسمار کرکے 13 جنوری کو رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا۔ عدالت نے عمارت کے بلڈر اور ایس بی سی اے افسران کے خلاف کریمنل کارروائی کی رپورٹ طلب کرتے ہوئے نقشہ بنانے والے آرکیٹیکٹ کا لائسنس بھی منسوخ کرنے کا حکم دے دیا۔

عدالت نے مزید حکم دیا کہ ایس بی سی اے کو ہر کیس میں بلڈر کے شناختی کارڈ کی نقل لازمی منسلک کرنا ہوگی اور جو بلڈرعدالت میں پیش نہ ہو اس کے شناختی کارڈ اور بینک اکاؤنٹس بلاک کردیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
Facebook Twitter Youtube