Tuesday, May 17, 2022  | 1443  شوّال  15

پنجاب کے تمام سرکاری ملازمین، اہلخانہ کیلئے ویکسینیشن لازمی قرار

SAMAA | - Posted: Jun 2, 2021 | Last Updated: 12 months ago
SAMAA |
Posted: Jun 2, 2021 | Last Updated: 12 months ago

پنجاب حکومت نے تمام سرکاری ملازمین اور ان کے اہل خانہ کیلئے کرونا وائرس سے بچاؤ کی ویکسین لازمی قرار دے دی، ملازمین کو 30 جون تک مہلت دی گئی ہے۔

پنجاب میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں کرونا وائرس سے مزید 45 افراد زندگی کی بازی ہار گئے جبکہ 447 نئے کیسز بھی رپورٹ ہوئے ہیں، 1239 مریض صحتیاب ہوگئے، صوبہ بھر میں مجموعی طور پر اموات 10 ہزار 84 اور کیسز 3 لاکھ 40 ہزار 557 تک پہنچ گئے۔

پنجاب حکومت نے صوبے کے تمام سرکاری ملازمین اور ان کے اہل خانہ کیلئے کرونا ویکسینیشن لازمی قرار دیدیا، ملازمین کو 30 جون تک لازمی ویکسین لگوانے کی ہدایت کی گئی ہے۔

پنجاب حکومت نے تمام صوبائی محکموں اور اداروں کیلئے ویکسینیشن سے متعلق مراسلہ جاری کردیا۔

اس سے قبل وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا تھا کہ پنجاب میں کرونا کیسز میں کمی آنا شروع ہوگئی ہے، کرونا ویکسین لگنے کے باوجود ہجوم میں جانے سے پرہیز کریں، اگلے ماہ ڈھائی لاکھ لوگوں کی ویکسی نیشن کا ہدف مقرر کیا ہے۔

 واضح رہے کہ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر سے جاری اعداد و شمار کے مطابق پاکستان میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کرونا وائرس سے انتقال کرنے والوں کی تعداد 80 ہے، ان میں سے 24 مریضوں کا انتقال وینٹی لیٹر پر ہوا جبکہ ایک ہزار 843 نئے کیسز بھی رپورٹ ہوئے، ملک میں مثبت کیسز کی شرح 3.90 فیصد ہے۔

مزید جانیے: کرونا وائرس کے پاکستان میں فعال کیسز کی تعداد55 ہزار52 ہوگئی

پاکستان نے منگل کو ملکی سطح پر تیار پہلی کرونا ویکسین ’’پاک ویک‘‘ لانچ کردی۔ چینی ماہرین کی مدد سے تیار ویکسین سنگل ڈوز ہے اور اس کی ایک لاکھ 20 ہزار خوراکیں تیار کی گئی ہیں۔

واضح رہے کہ پاکستان میں کرونا کیسز کی شرح میں کمی کے بعد این سی او سی نے سیاحت سمیت کئی شعبوں پر عائد پابندیاں ختم کردی ہیں جبکہ تعلیمی سرگرمیاں بھی بتدریج بحال کی جارہی ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube