Monday, May 16, 2022  | 1443  شوّال  15

خیبرپختونخوا: اسکول وکالجز میں نئے طلبہ کی ریگنگ پر پاپندی

SAMAA | - Posted: Oct 17, 2020 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Oct 17, 2020 | Last Updated: 2 years ago

خیبرپختونخوا کے محکمہ اعلیٰ تعلیم نے صوبے کے اسکولز و کالجوں میں طلبہ کی ریگنگ پر پابندی عائد کردی تاکہ نئے طلبہ بلا خوف کالج آسکیں۔

کالجوں میں نئے طلبہ کے ساتھ مذاق کرنے اور انہیں بیوقوف بنانے کے بڑھتے واقعات کا نوٹس لیتے ہوئے محکمہ اعلیٰ تعلیم خیبرپختونخوا نے اس فضول اور بسا اوقات تکلیف دہ حرکت کو روکنے کی غرض سے تمام اسکول و کالجز کو ہدایت نامہ جاری کردیا۔

صوبائی حکومت کے ترجمان کامران بنگش نے کہا کہ فولنگ کے نام پر طلبہ کو ہراساں کئے جانے کی اجازت نہیں دی جاسکتی۔ انہوں نے واضح کیا کہ فولنگ کی صورت میں اس عمل میں ملوث پائے گئے طلبہ کے ساتھ کالج کے پرنسپل کے خلاف بھی کارروائی ہوگی۔

رواں ماہ کے آغاز میں وزیر تعلیم شہرام ترکئی نے ٹویٹر پیغام میں بتایا تھا کہ صوبائی کابینہ نے صوبہ بھر میں اسکول بیگز (محدود وزن) ایکٹ نافذ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

اس قانون کے تحت طلبہ کی کلاسوں کے مطابق ان کے اسکول بیگز پر نظر رکھی جائے گی۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube