Thursday, May 19, 2022  | 1443  شوّال  17

وزیراعظم چینی کمیشن میں پیش ہوکر جواب دیں، مریم اورنگزیب

SAMAA | - Posted: May 27, 2020 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: May 27, 2020 | Last Updated: 2 years ago

ن لیگ کی ترجمان مریم اورنگزیب نے عمران خان سے چینی کمیشن کے سامنے پیش ہونے کا مطالبہ کردیا، کہتی ہیں کہ سیاسی مخالفین کو کٹہرے میں کھڑا کرکے مجرموں کو راہ فرار نہیں دی جاسکتی، سابق وزیراعظم کی حکومت نے اس وقت سبسڈی دی جب چينی کی رسد، طلب سے کم تھی۔

مسلم ليگ ن کی ترجمان نے وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے احتساب شہزاد اکبر کی پريس کانفرنس پر رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہا سياسی مخالفين کو کٹہرے ميں کھڑا کرکے مجرموں کو راہ فرار نہيں دی جاسکتی۔

مریم اورنگزیب کا کہنا ہے کہ شاہد خاقان عباسی نے کمیشن کو بتایا کہ ہاں انہوں نے سبسڈی دی، سابق وزیراعظم کی حکومت نے اس وقت سبسڈی دی جب چينی کی رسد، طلب سے کم تھی، اس طرح کے ہتھکنڈوں سے عمران خان اور عثمان بزدار کو بچايا نہيں جاسکتا۔

شہزاد اکبر نے ن لیگی رہنماء پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی 17 ارب روپے کی اضافی سبسڈی دی، مارچ 2017ء میں صرف 4 لاکھ ٹن چینی برآمد کی اجازت دی، اس وقت عالمی مارکیٹ میں ریٹ زیادہ تھا، سبسڈی کی ضرورت نہیں تھی، شاہد خاقان عباسی نے جان بوجھ کر ایکسپورٹ کی اجازت نہیں دی۔

مریم اورنگزیب نے عمران خان سے کمیشن کے سامنے پیش ہونے کا مطالبہ کردیا۔ سوال کیا کہ عمران خان کميشن کو بتائيں کہ چینی کی قلت ہوتے ہوئے ايکسپورٹ کی اجازت کيوں دی؟۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
SUGAR COMMISSION, SUGAR CRISIS, PAKISTAN, PTI, IMRAN KHAN, PMLN, PPP, MARYAM ORANGZAIB, SHAHID KHAQAN ABBASI, SHAHZAD AKBAR,
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube