Monday, May 16, 2022  | 1443  شوّال  14

کروناوائرس:اسکول بندکرنےکیلیےصوبےخودمختارہیں،ظفرمرزا

SAMAA | - Posted: Mar 4, 2020 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Mar 4, 2020 | Last Updated: 2 years ago

معاون خصوصی برائےصحت ظفرمرزا نے کہا ہے کہ کرونا وائرس کے مریضوں کی تعداد ابھی تک پاکستان میں بہت کم ہے،200 سے زیادہ مشتبہ افراد کا ٹیسٹ کرچکے ہیں اور مریض صحت یاب بھی ہورہے ہیں۔

راول پنڈی میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ظفر مرزا نے کہا کہ ملک ميں کرونا وائرس سے 5 متاثر افراد ہيں جن کی حالت بہتر ہوتی جارہی ہے،صورتحال اتنی سنگين نہيں کہ اسکول بند کيے جائيں، اسکول بند کرنے کی تجويز وزارت صحت نے نہيں دی،اس سلسلے میں صوبائی حکومتيں فيصلہ کرنے کيلئے خودمختار ہيں۔ظفر مرزا نے بتایا کہ بیرون ملک سے آنے والوں کی اسکريننگ جاری ہے، ہماری تیاریاں مکمل ہیں۔

انھوں نے مزید بتایا کہ کرونا وائرس سے پریشان ہونا سب سے بڑا مسئلہ ہے،عوام ماسک کے پیچھے نہ بھاگیں، ہر نزلہ زکام کو کرونا وائرس نہ سمجھیں، اپنے ہاتھوں کو بار بار دھوئیں اوراگرآپ کو زکام ہو توہجوم والی جگہ پرنہ جائیں۔

چین سے آنے والوں سےمتعلق انھوں نے بتایا کہ اگر آپ چین سے آئے ہیں تو آئسولیشن میں رہیں، چین یا ایران سے آئے ہیں تو14 دن اپنے آپ پرگہری نظر رکھیں۔ انھوں نے یہ بھی بتایا کہ چین کے صوبے ووہان  سے باہر موجود پاکستانیوں کے وطن واپس آنے پر کوئی پابندی نہیں۔

ڈاکٹر ظفر مرزا کا کہنا تھا کہ حکومت کا صحت کی بہتری کے لئے وژن بڑا کلیئر ہے، ائیرپورٹ اور لینڈ روٹ پر اسکریننگ کا موثر نظام رائج کیا جبکہ باہر سے آنے والے لوگوں کو بھی فالوکیا جارہا ہے، ہمیں بہتری کی امید رکھنی چاہئے۔

ڈینگی سے متعلق انھوں نے بتایا کہ ڈینگی کے حوالے سے تیاری شروع کر دی ہے،نیشنل پروگرام لارہے ہیں جس پر صوبوں سے مشاورت کی ہے، اس مرتبہ ڈینگی کو قابو کرنےکی ایک بہترطریقے سے کوشش کریں گے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube