Tuesday, May 17, 2022  | 1443  شوّال  15

جعلی اکاؤنٹس، فالودہ والے کے بعد کراچی کا رکشہ والا ارب پتی

SAMAA | - Posted: Oct 13, 2018 | Last Updated: 4 years ago
SAMAA |
Posted: Oct 13, 2018 | Last Updated: 4 years ago

کراچي ميں فالودہ والے کے بعد رکشے والا بھی ارب پتی بن گيا، شہر قائد ميں ایک اور جعلی اکاؤنٹس سے بڑی ٹرانزیکشن کا انکشاف ہوا ہے۔

نمائندہ سماء کے مطابق کراچی کا رکشہ چلانے والے کے اکاؤنٹس سے 3 ارب روپے کی ٹرانزیکشن ہوئی، سندھ ميگا منی لانڈرنگ اسکينڈل کی تفتيش کرنے والی جے آئی ٹی نے رکشہ ڈرائيور رشيد کا بيان ريکارڈ کرليا۔

مزید جانیے : کراچی کے فالودہ فروش کے اکاؤنٹ میں کس کا پیسہ ہے، سراغ مل گیا

کورنگی میں کرائے کے مکان میں رہنے والے رشید کا کہنا ہے کہ طارق روڈ پر ایک دفتر میں ملازم تھا، انہوں نے ہی بینک اکاؤنٹ کھلوایا تھا۔

اس سے قبل اورنگی ٹاؤن کا غریب محنت کش فالودہ والے کے بینک اکاؤنٹ میں اربوں روپے کی موجودگی کا انکشاف ہوا تھا، معلوم کرنے پر پتہ چلا کہ جعلی دستخطوں کے ذریعے اکاؤنٹ کھلوایا گیا۔

ویڈیو دیکھیں : کراچی کا فالودہ والا گھر بیٹھے ‘ارب پتی’ بن گیا

سندھ میں جعلی اکاؤنٹس اور منی لانڈرنگ کی تحقیقات میں سپریم کورٹ کی ہدایت پر جے آئی ٹی قائم کی گئی تھی جس نے درجنوں جعلی بینک اکاؤنٹس کی تفصیلات حاصل کرلیں، اس کیس میں اومنی گروپ کے سربراہ انور مجید اور ان کا بیٹا عبدالغنی مجید زیر حراست ہیں جبکہ سابق صدر آصف زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور سے بھی تحقیقات کی گئی ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube