Wednesday, May 18, 2022  | 1443  شوّال  16

سابق خاتون اول کلثوم نواز کی میت پاکستان پہنچا دی گئی

SAMAA | - Posted: Sep 14, 2018 | Last Updated: 4 years ago
SAMAA |
Posted: Sep 14, 2018 | Last Updated: 4 years ago

بیگم کلثوم نواز کی میت خصوصی طیارے کے ذریعے پاکستان پہنچا دی گئی ہے۔ طیارے میں شریف خاندان کے دیگر افراد بھی موجود تھے۔ کلثوم نواز کی نماز جنازہ مولانا طارق جمیل پڑھائیں گے۔

کلثوم نواز کی میت حج ٹرمینل سے جاتی امرا لے جائی جائے گی، شہباز شريف اور ديگر خاندان کے افراد پي آئي اے کي پرواز ميں میت کے ہمراہ وطن پہنچیں گے۔ بيگم کلثوم نواز کي صاحبزادي اسما نواز بھي پرواز ميں موجود تھیں۔ حسن اور حسين نواز کے بچے بھي پرواز ميں موجود ہیں۔ حسن نواز، حسین نواز اور اسحاق ڈار نے لندن میں ٹھہرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

کلثوم نواز کی میت طیارے سے ایمبولینس میں منتقل کی جائے گی۔ میت کے ساتھ آنے والے 13 عزیزوں کو حج ٹرمینل پر پہنچایا جائے گا، جس کے بعد فیملی کے پانچ افراد جن میں میت لینے کیلئے ایپرن تک جائیں گے، سات گاڑیاں اور ایک ایمبولینس ایئرپورٹ کے اندر جائیں گی۔ کلثوم نواز کی نماز جنازہ شام 5بجے ادا کي جائے گي۔ نماز جنازہ شریف سٹی کمپلیکس میں  مولانا طارق جمیل پڑھائیں گے، جب کہ انہیں رائے ونڈ کے فارم میں آسوہ خاک کیا جائے گا۔

[caption id="attachment_1273922" align="aligncenter" width="640"] تدفین کے انتظامات مکمل کرلیے گئے ہیں[/caption]

مسافروں کی امیگریشن اور کسٹم حج ٹرمینل پر ہوگی۔ اس موقع پر پنجاب حکومت کے تین افسران شریف فیملی کو سہولت فراہم کرنے کے لئے موجود ہوں گے۔ ایئرپورٹ کے داخلی اور خارجی راستوں پر سخت سیکیورٹی اور چیکنگ کی جا رہی ہے۔ شریف فیملی کی سات گاڑیاں حاج ٹرمینل سے اندر جائیں گی۔ جاتی امرا میں بھی سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں۔ عام افراد کو داخلے کی اجازت نہیں ہوگی

اس سے قبل بیگم کلثوم نواز کی نمازِ جنازہ لندن کے ریجنٹ اسلامک سینٹر میں ادا کی گئی، جس میں صدر مسلم لیگ ن شہباز شریف، حسین نواز، حسن نواز، اسحاق ڈار، چوہدری نثار، لیگی کارکن اور برطانیہ میں مقیم پاکستانیوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔ ایک اندازے کے مطابق بیگم کلثوم نواز کی نمازِ جنازہ میں 8 ہزار کے لگ بھگ افراد شریک ہوئے۔

قبل ازیں بیگم کلثوم کی میت کی روانگی پرواز کی تاخیر کی وجہ سے رکی رہی، لاہور سے لندن جانے والی پرواز ڈیڑھ گھنٹہ تاخیر سے روانہ ہوئی اور پاکستانی وقت کے مطابق رات نو بج کر ستائیس منٹ پر لندن پہنچی۔

نواز شریف، مریم نواز اور محمد صفدر کے پیرول رہائی میں 5 روز کی توسیع کر دی گئی ہے، انہیں 12 ستمبر سے 17 ستمبر شام 4 بجے تک پیرول پر رہائی مل گئی ہے۔ محکمہ داخلہ پنجاب نے باقاعدہ نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے۔

 

واضح رہے کہ  سابق خاتون اول بیگم کلثوم نواز منگل کے روز 11 ستمبر کو لندن میں انتقال کر گئیں۔ ان کی حالت دوبارہ انتہائی تشویشناک ہو گئی تھی، جس کے بعد انہیں ایک مرتبہ پھر وینٹی لیٹر پر منتقل کیا گیا، بیگم کلثوم نواز کے پھیپھڑوں نے کام کرنا چھوڑ دیا تھا۔

 

بیگم کلثوم نواز کینسر کے عارضے میں مبتلا تھیں اور گزشتہ 13 ماہ سے لندن کے ہارلے اسٹریٹ کلینک میں زیر علاج تھیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
Facebook Twitter Youtube