Monday, May 16, 2022  | 1443  شوّال  14

بنوں: کتے کو سیاسی جماعت کا جھنڈا پہنا کر گولی مارنے والے ملزمان گرفتار

SAMAA | and - Posted: Jul 28, 2018 | Last Updated: 4 years ago
Posted: Jul 28, 2018 | Last Updated: 4 years ago

بنوں پولیس نے کتے کو سیاسی جماعت کا جھنڈا پہنا کر گولی مار کر قتل کرنے والے ملزمان کو گرفتار کرلیا ہے۔ پولیس نے کہا ہے کہ ملزمان کو سرعام سزا دی جائے گی تاکہ آئندہ کوئی ایسا ظالمانہ اقدام اٹھانے کی جرات نہ کرسکے۔

خیبر پختونخوا پولیس کے آفیشل سوشل میڈیا پیج پر شیئر ہونے والی تفصیلات کے مطابق بنوں پولیس نے وڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد نوٹس لیتے ہوئے 12 گھنٹے کی مسلسل کوششوں کے بعد ملزمان کو گرفتار کرلیا ہے۔ جنہیں قرار واقعی سزا دی جائے گی۔

تھانہ جانی خیل بنوں پولیس کے مطابق ملزمان کی شناخت حضرت عمر ولد گل شیر خان اور نصیر اللہ ولد قدر جان کے نام سے ہوئی ہے۔ دونوں ملزمان کا تعلق بنوں کے علاقہ زندی علی خیل سے ہے۔

پولیس کے مطابق ملزمان خیبر پختونخوا اسمبلی کے حلقہ پی کے 85 سے قومی وطن پارٹی کے امیدوار عدنان وزیر کے سپورٹرز تھے۔ اس حلقہ سے تحریک انصاف کے امیدوار شاہ محمد شاہ نے عدنان وزیر کو شکست دی۔ جس پر ملزمان نے شکست کا بدلہ کتے سے لے لیا۔ پولیس نے ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز سوشل میڈیا پر ایک وڈیو وائرل ہوگئی تھی جس میں دو افراد ایک کتے کو درخت سے باندھ کر گولی مارتے ہوئے دیکھے گئے۔ مقتول کتے پر تحریک انصاف کا جھنڈا لپیٹا ہوا تھا۔

قبل ازیں کراچی میں 16 جولائی کو تحریک انصاف کے کارکنوں نے ایک گدھے پر’’نواز‘‘ لکھ کر اس پر شدید کیا اور جب وہ زخموں سے چور زمین پر گرگیا تو اسے چھوڑ کر چلے گئے تھے۔

کراچی میں جانوروں کے حقوق کے لیے کام کرنے والی ایک تنظیم ’ اے سی ایف ریسکیو ‘ نے واقعہ کی اطلاع ملتے ہی متاثرہ گدھے کو گاڑی میں ڈال کر اپنے جانوروں کے شیلٹر ہوم پہنچایا اور اس حوالے سے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ گدھے کے منہ اور پیٹ پر گھونسے اور لاتیں مارے گئے۔ اس کی ناک توڑی گئی اور اتنا مارا گیا کہ وہ بے ہوش ہوگیا۔ اس کے جسم پر رسی اور گاڑی کے ٹائر کے نشان ہیں۔ یہ سب کچھ صرف اس لیے کہ ایک سیاسی جماعت کو گدھا ثابت کیا جاسکے۔

متاثرہ گدھا چند دن زیر علاج رہنے کے بعد چل بسا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube