Wednesday, May 18, 2022  | 1443  شوّال  16

کاشف ڈیوڈکا90روزہ ریمانڈ منظور،100افراد کےقتل کااعتراف

SAMAA | - Posted: Apr 26, 2016 | Last Updated: 6 years ago
SAMAA |
Posted: Apr 26, 2016 | Last Updated: 6 years ago

کراچی : بدنام زمانہ ٹارگٹ کلر کاشف ڈیوڈ کو نوئے روزہ ریمانڈ پر رینجرز کی تحویل میں دیدیا گیا ہے، ملزم نے دوران تفتیش 100 افراد کے قتل سمیت کئی سنسنی خیز انکشافات کر ڈالے۔

مزید دیکھیں : نائن زیرو پر چھاپے کو ایک سال گزر گیا

ایم کیو ایم کے مرکز نائن زیرو سے گرفتار ٹارگٹ کلر کاشف ڈیوڈ کو کراچی کی انسداد دہشت گردی کی عدالت میں پیش کردیا گیا، دوران سماعت رینجرز کی جانب سے ملزم کے نوئے روزہ ریمانڈ کی استدعا کی گئی، جسے عدالت نے منظور کرتے ہوئے ملزم کاشف ڈیوڈ کو نوئے روزہ ریمانڈ پر رینجرز کی تحویل میں دیتے ہوئے پندرہ روز ميں جے آئي ٹي بنانے کا حکم دے دیا۔

نائن زیرو کے قریب چھاپہ،انتہائی مطلوب ٹارگٹ کلرگرفتار، جدید اسلحہ برآمد

رینجرز وکیل کے مطابق ملزم نے سو سے زائد افراد کی ٹارگٹ کلنگ کا اعتراف کیا ہے، ملزم نے دوران تفتیش اعتراف کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ جنوبی افریقہ، سری لنکا سمیت دیگر ممالک میں عسکری ونگ کی برانچز چلاتا تھا۔

مزید پڑھیں : نائن زیرو کے علاقے میں رینجرز کا گشت

کاشف ڈیوڈ کے حوالے سے پولیس افسران کہتے ہیں قصبہ کالونی کا رہائشی کاشف ڈیوڈ انیس سو بانوے کے آپریشن میں بھی قانون نافذ کرنے والے اداروں کو مطلوب رہا، کالی پہاڑی اورنگی ٹاؤن کے ملحقہ علاقوں میں دہشت جمانے والے کلیم کے ساتھیوں میں کاشف کا شمار ہوتا ہے۔

کاشف ڈیوڈ ٹارگٹ کلنگ کے درجنوں مقدمات میں ملوث اجمل پہاڑی کا دست راست سمجھا جاتا ہے، سعید بھرم کی مبینہ ٹارگٹ کلنگ ٹیم یں بھی کاشف ڈیوڈ کام کرتا رہا ہے، اورنگی ٹاؤن اور ضلع غربی کے علاقے پر کاشف ڈیوڈ اور رحمان بھولا کا کنٹرول تھا، رحمان بھولا بلدیہ ٹاؤن فیکٹری میں بھی مفرور ملزم ہے۔

واضح رہے کہ رینجرز نے ملزم کاشف ڈیوڈ کو ایم کیو ایم کے مرکز نائن زیرو پر کارروائی کے دوران منگل کی صبح گرفتار کیا، ملزم علاقے میں ٹیوشن سینٹر کی آڑ میں مہلک ہتھیاروں کا گودام چلاتا تھا، ايک سو بيس گز کے مکان ميں جہاں ٹيوشن ديا جاتا تھا، وہيں ايک کمرے ميں اسلحہ کا ڈھير بھي جمع تھا۔ سماء
WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
Facebook Twitter Youtube