Wednesday, May 18, 2022  | 1443  شوّال  16

فورسز کا آپریشن،القاعدہ بلوچستان ونگ کاسربراہ ہلاک،جنگجوبیوی گرفتار

SAMAA | - Posted: Aug 2, 2015 | Last Updated: 7 years ago
SAMAA |
Posted: Aug 2, 2015 | Last Updated: 7 years ago

ویب ایڈیٹر:

کوئٹہ:   بلوچستان کے پاک افغان سرحدی ضلع چاغی میں سیکیورٹی فورسز اور حساس اداروں نے کامیابی مشترکہ کارروائی کے دوران القاعدہ بلوچستان کا سربراہ عمر لطیف ہلاک کردیا، جب کہ کارروائی میں عمر لطیف کی بیوی اور القاعدہ خواتین ونگ کی سربراہ کر زندہ گرفتار کرلیا گیا۔

سیکیورٹی فورسز ذرائع کے مطابق سمنگلی روڈ پر واقع سرور ٹاؤن میں ایف سی، پولیس اور حساس اداروں نے مشترکا کارروائی کے دوران القاعدہ کا اہم جنگجو ہلاک کردیا، ذرائع کے مطابق ہلاک جنگجو کا نام عمر لطیف عرف لقمان تھا، جو القاعدہ بلوچستان چیپٹر کا سربراہ تھا، فورسز ذرائع کے مطابق دہشت جنفجو سربراہ بم دھماکوں، فورسز پر حملوں اور دہشت گردی کی متعدد وارداتوں میں ملوث تھا۔ کارروائی کے دوران دہشت گرد کے قبضے سے بھاری تعداد میں اسلحہ اور گولا باورد برآمد ہوا۔

عمر لطیف عرف لقمان کو چاغی میں واقع کمپاؤنڈ میں آپریشن کے بعد ہلاک کیا گیا، عمر لطیف گجرات میں پاک فوج کے کیمپ، گجرانوالہ میں پولیس دفاتر اور لاہور میں اقلیتوں کی عبادت گاہوں پر حملوں سمیت پنجاب میں دہشتگردی اور اہم شخصیات کی اغوا کے پندرہ سے زائد مقدمات میں مطلوب تھا۔ ہلاک دہشت گرد کی بیوی طیبہ عرف فریحہ باجی  بھی دہشت گرد کارروائیوں میں ملوث تھی، ملزمہ پنجاب اور بلوچستان میں القاعدہ خواتین ونگ کی سربراہ تھی ۔

دوسری جانب دہشت گرد سربراہ کی ہلاکت سے متعلق وزیر داخلہ بلوچستان سرفراز بگٹی نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ حساس ادارے اور سیکیورٹی فورسز کی مشترکہ کارروائی بلوچستان کے علاقے چاغی میں کی گئی، ہلاک دہشت گرد کے سر کی قیمت 20لاکھ روپے مقرر تھی، سرفراز بگٹی کا مزید کہنا تھا کہ کارروائی کے دوران دہشت گرد کی بیوی کو گرفتار کرلیا گیا ہے، جو القاعدہ خواتین ونگ کی سربراہ ہے، جس سے تفتیش جاری ہے۔ سماء

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
Facebook Twitter Youtube