Wednesday, May 18, 2022  | 1443  شوّال  17

سانحہ ماڈل ٹاؤن، پی اے ٹی رہنماؤں، پولیس اہلکاروں پر فرد جرم عائد کرنیکا فیصلہ

SAMAA | - Posted: Jul 8, 2015 | Last Updated: 7 years ago
SAMAA |
Posted: Jul 8, 2015 | Last Updated: 7 years ago

اسٹاف رپورٹ

لاہور : لاہور کی انسداد دہشت گردی عدالت نے سانحہ ماڈل ٹاؤن ميں پاکستان عوامی تحريک اور نامزد پوليس اہلکاروں پر فرد جرم عائد کرنے کا فيصلہ کيا ہے، 14 جولائی کی سماعت ميں ملزموں کو فرد جرم پڑھ کر سنائی جائے گی۔

سانحہ ماڈل ٹاؤن ميں پوليس کی ايف آئی آر پر کارروائی آگے بڑھنے گی، چالان جمع ہونے کے بعد ملزموں پر فرد جرم عائد کرنے کا فيصلہ کرلیا گیا۔

پوليس کی ايف آئی آر ميں پاکستان عوامی تحريک کے رہنماء رحيق عباسی، خرم نواز گنڈا پور اور ديگر کارکنوں کو ملزم نامزد کيا گيا، جن پر 14 جولائی کو فرد جرم عائد کردی جائے گی، اس ايف آئی آر کے مطابق رکاوٹيں ہٹانے کے دوران پاکستان عوامی تحريک کے کارکنوں نے مزاحمت کی جس کے باعث تصادم شروع ہوا۔

مقدمے کے چالان کے مطابق ايس پی سيکيورٹی علی سلمان ايس ايچ او سبزہ زار عامر سليم اور 4 پوليس اہلکاروں پر بھی فرد جرم عائد ہوگی۔

پاکستان عوامی تحريک نے تفتيش کے بعد عدالتی کارروائی کا بھی بائيکاٹ کر رکھا ہے، دوسری جانب ايس ايچ او عامر سليم سميت 5 پوليس اہلکار گرفتار ہوئے جبکہ علی سليمان تاحال مفرور ہيں۔ سماء

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube