Wednesday, May 18, 2022  | 1443  شوّال  16

الطاف حسین کا وزیراعظم سے استعفیٰ کا مطالبہ، دوست کہنا غلطی تھی

SAMAA | - Posted: Jun 13, 2015 | Last Updated: 7 years ago
SAMAA |
Posted: Jun 13, 2015 | Last Updated: 7 years ago

ویب ایڈیٹر:

ایم کیو ایم کے قائد نے وزیراعظم کے گزشتہ روز کے خطاب پرناراضی کا اظہار کرتے ہوئے کہاہے کہ کہ نوازشریف کودوست کہنامیری غلطی تھی اگر وہ ملکی سلامتی چاہتےہیں توفوری استعفیٰ دے دیں۔

ساتھ ہی یہ بھی کہہ گئے کہ وزیراعظم کل گورنرسندھ سےہڑتالیں ختم کروانےکاکہتےرہے شاید وہ یہ بھول گئے ہیں کہ انہوں نے گورنر کو نہیں وزیراعلیٰ سندھ کو کپتان بنایا تھا۔

الطاف حسین نے ایک بار پھر پارٹی قیادت چھوڑنے کا عندیہ بھی دے دیا،نائن زیرو پرکارکنان سے ہنگامی خطاب کرتے ہوئے کارکنان اور پارٹی رہنماؤں کی غیر حاضری پر سخت نارضگی کا اظہار کرتے ہوئے بولے کہ کئی رہنماء میرا خطاب سننے نہیں آئے،میں نے اپنے مستقبل کی پرواہ کئے بغیر دوسروں کے لئے جدوجہد کی، عوام اورکارکنوں کو بتایا کہ حکومت کیا ہوتی ہے۔ میں نےکہا تھاکہ قیادت نہیں چھوڑوں گا،مگر یہ نہیں کہا تھاکہ کارکن غیرحاضررہیں اورمیں اکیلے کام کرتارہوں۔

الطاف حسین نے مزید کہا کہ فریاد کرنے یا دہائیاں دینے سے کوئی فائدہ نہیں،رینجرزاورپولیس سےمارکھانے سے بہترہے کہ کارکن خاموش رہیں۔ سماء

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube