Thursday, May 19, 2022  | 1443  شوّال  17

ملک میں تیسری سیاسی قوت کا حامی ہوں، سازشی نہیں، پرویز مشرف

SAMAA | - Posted: Jan 20, 2015 | Last Updated: 7 years ago
SAMAA |
Posted: Jan 20, 2015 | Last Updated: 7 years ago

اسٹاف رپورٹ

کراچی : سابق صدر پرویز مشرف کہتے ہیں حکومت کو سمجھ جانا چاہئے کہ فوج میں اُن کی حیثیت کیا ہے، وہ ملک میں تیسری سیاسی قوت کے حامی ہیں تاہم وہ سازشی نہیں، جو کہنا ہوتا ہے آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر کہتے ہيں، بھارت سے برابری کی سطح پر بات کرنی چاہئے۔

پرویز مشرف غداری کیس کا سول ملٹری تعلقات پر کتنا اثر پڑے گا، سابق صدر نے خود ہی بتا دیا، سماء کے پروگرام آواز میں گفتگو کرتے ہوئے پرویز مشرف نے حکومت کو خبردار کیا۔

سابق صدر کہتے ہیں اکبر بگٹی کیس میں سے ہوا نکل گئی، آج تک کوئی جائے وقوعہ تک بھی نہیں گیا، پرویز مشرف نے فوجی عدالتوں کے قیام اور حقانی نیٹ ورک کیخلاف کارروائی کی بھی حمایت کی۔

سابق صدر ملکی سیاست میں تیسری قوت کے بھی قائل ہیں، پیپلزپارٹی نے پاکستان کا ستیا ناس کردیا، موجودہ دور میں بھی ملک میں بری گورننس ہے۔

کہتے ہیں کہ مودی سرکار پاکستان کو نیپال اور بھوٹان کی طرح دبانا چاہتی ہے، پاکستان ایٹمی طاقت ہے، حکومت کو برابری کی سطح پر بھارت سے بات کرنی چاہیئے۔ سماء

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube