Thursday, May 19, 2022  | 1443  شوّال  17

کالعدم تحریک طالبان، میرانشاہ میں حکومت سے براہ راست مذاکرات پر آمادہ

SAMAA | - Posted: May 16, 2014 | Last Updated: 8 years ago
SAMAA |
Posted: May 16, 2014 | Last Updated: 8 years ago

اسٹاف رپورٹ

پشاور : کالعدم تحریک طالبان نے میرانشاہ میں حکومت کے ساتھ براہ راست مذاکرات پر آمادگی ظاہر کردی، طالبان کمیٹی کا کہنا ہے کہ بات چیت میں تاخیر سے مزید مسائل جنم لیں گے۔

طالبان نے میرانشاہ میں مذاکرات کی حامی بھر کر بال حکومت کے کورٹ میں پھینک دی ہے، ذرائع کے مطابق طالبان نے مذاکراتی کمیٹی کو بھی اپنے فیصلے سے آگاہ کردیا، طالبان کا مؤقف ہے کہ وہ میران شاہ میں مذاکرات کیلئے تیار ہیں لیکن شرط یہ ہے کہ انہیں جان کے تحفظ کی ضمانت دی جائے۔

طالبان نے شمالی وزیرستان میں کرفیو کے باعث آمد و رفت کی مشکلات کا بھی شکوہ کیا تاہم کرفیو نفاذ کے خاتمے نے طالبان کی اس شکایت کا ازالہ کردیا ہے۔

دوسری جانب طالبان کمیٹی کے رکن پروفیسر ابراہیم نے مذاکراتی عمل میں تاخیر پر تشویش ظاہر کی ہے، ان کا کہنا تھا کہ حکومتی تساہل سے مزید مسائل جنم لیں گے، انہوں نے فوج سے بھی اپیل کی کہ وہ مذاکرات کے عمل میں سنجیدہ کردار ادا کریں، پروفیسر ابراہیم نے واضح کیا کہ رکاوٹوں کے باوجود وہ مذاکراتی عمل سے دستبردار نہیں ہوں گے۔ سماء

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube