Thursday, May 19, 2022  | 1443  شوّال  17

فہدعزیز تشدد کیس،وزیراعظم کا نوٹس،24گھنٹوں میں رپورٹ طلب

SAMAA | - Posted: Feb 11, 2014 | Last Updated: 8 years ago
SAMAA |
Posted: Feb 11, 2014 | Last Updated: 8 years ago

ویب ڈیسک:
اسلام آباد : وزیراعظم میاں محمد نواز شریف نے ایم کیو ایم کے کارکن فہد عزیز پر پولیس تشدد کا نوٹس لے لیا۔ وزیراعظم نواز شریف نے آئی جی سندھ سے 24  سے گھنٹوں میں رپورٹ طلب کرلی۔

وزیراعظم ہاؤس کی جانب سے بیان میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم میاں محمد نواز شریف نے ایم کے ایم کے کارکن فہد عزیز پر پولیس کی جانب سے وحشیانہ تشدد کا نوٹس لیتے ہوئے 24 گھنٹوں میں رپورٹ طلب کرلی ہے۔  وزیراعظم نے آئی جی سندھ کو حکم دیتے ہوئے کہا کہ واقعہ سے متعلق فوری رپورٹ 24 گھنٹے میں پیش کی جائے۔ بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ رپورٹ میں ذمہ داروں کا تعین کیا جائے، جب کہ وزیراعظم کی جانب سے جاری بیان میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ واقعہ میں ملوث کون سے اہل کار تھے جن کی جانب سے متحدہ کے کارکن پر بدترین تشدد کیا گیا۔

وزیراعظم کی جانب سے طلب رپورٹ میں حادثے کے ذمہ داروں کا تعین اور جلد از جلد کارروائی کا حکم بھی دیا گیا ہے، واضح رہے کہ ایم کیو ایم کے سینیر رہنما ڈاکٹر  فاروق ستار کی جانب سے وزیراعظم کو خط ارسال کیا گیا تھا، جس میں درخواست کی گئی تھی کہ وزیراعظم رینجرز اور پولیس کے ہاتھوں متحدہ کے کارکنوں پر تشدد، اغوا اور ہلاکتوں کو نوٹس لیں۔

اس قبل گزشتہ روز ایم کیو ایم کی جانب سے سندھ ہائی کورٹ میں فہد عزیز پر تشدد کے خلاف پٹیشن بھی دائر کی گئی تھی، جس کی سماعت آئی ہوئی۔ سماعت جسٹس مقبول باقر نے کی۔ سماعت میں عدالت کا کہنا تھا کہ فہد عزیز پر تشدد سے متعلق طبی رپورٹ عدالت میں پیش کی جائے، جب کہ پولیس کی سرزنش کرتے ہوئے جسٹس مقبول باقر کا کہنا تھا کہ فہد عزیز اور اس کے اہل خانہ کو کسی طرح بھی حراساں نہ کیا جائے اور  تھانے کا روزنامچہ 15 روز میں عدالت میں پیش کیا جائے۔ سماء

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube