Wednesday, May 18, 2022  | 1443  شوّال  16

وحیدہ شاہ کیخلاف فیصلہ محفوظ،وکیل کےذریعےالیکشن کمیشن سےمعافی مانگ لی

SAMAA | - Posted: Mar 6, 2012 | Last Updated: 10 years ago
SAMAA |
Posted: Mar 6, 2012 | Last Updated: 10 years ago

اسٹاف رپورٹ
اسلام آباد : الیکشن کمیشن نے سندھ اسمبلی کے حلقہ پی ایس تریپن کی نشست پر دھاندلی اور تشدد کے معاملے پر

وحیدہ شاہ کے خلاف فیصلہ کل دوپہر دو بجے تک محفوظ کر لیا ہے۔ وحیدہ شاہ نے اپنے وکیل مصطفی ستی کے ذریعے الیکشن کمشین سے معافی مانگ لی ہے۔

چیف الیکشن کمشنر، جسٹس ریٹائرڈ حامد علی مرزا کی زیر صدارت الیکشن کمیشن نے وحیدہ شاہ کے خلاف خاتون پریذائیڈنگ آفیسر کو تھپڑ مارنے کی شکایت کی سماعت کی،

وحیدہ شاہ کے وکیل نے الیکشن کمیشن کو بتایا کہ وحیدہ شاہ نے غلطی پر معافی بھی مانگ لی ہے، اور کیس سپریم کورٹ میں زیر سماعت ہے، لہذا الیکشن کمیشن اور سپریم کورٹ میں بیک وقت سماعت نہیں ہوسکتی۔

پی ایس 53کے ضمنی انتخابات میں حصہ لینے والے مشتاق علی تالپور کے وکیل نے الیکشن کمیشن کو بتایا کہ حلقہ کے گیارہ پولنگ اسٹیشنوں پر تشدد اور دھاندلی کے واقعات ہوئے،

جن کے ثبوت بھی موجود ہیں، انہوں نے الیکشن کمیشن سے استدعا کی کہ پی ایس تریپن سندھ کے انتخابات کو کالعدم قرار دیا جائے، وکیلوں کے دلائل سننے کے بعد الیکشن کمیشن نے وحیدہ شاہ کیس کا فیصلہ محفوظ کرلیا۔ سماء

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
Facebook Twitter Youtube