Wednesday, May 18, 2022  | 1443  شوّال  17

سپریم کورٹ نے بابراعوان پر فرد جرم کی کارروائی دو اپریل تک ملتوی کردی

SAMAA | - Posted: Mar 20, 2012 | Last Updated: 10 years ago
SAMAA |
Posted: Mar 20, 2012 | Last Updated: 10 years ago

اسٹاف رپورٹر

اسلام آباد : سپریم کورٹ نے توہین عدالت کیس میں سابق وزیر قانون بابراعوان کے خلاف فرد جرم عائد کرنے کی کارروائی دو اپریل تک ملتوی کر دی۔

جسٹس اعجازافضل کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے دو رکنی بینچ نے کیس کی کارروائی بابراعوان کی استدعا پر ملتوی کی۔ بینچ نے بابراعوان کو روسٹرم پر بلایا تو انہوں نے اپنے وکیل کی لاہورمیں مصروفیت کے باعث کارروائی ملتوی کرنے کی استدعا کی۔

 بابر اعوان کا کہنا تھا کہ اُن کے وکیل کل سے سپریم کورٹ بار کے وفد کے ہمراہ بھارت جا رہے ہیں اس لیے ان کی عدالت میں حاضری کچھ دنوں بعد ہی ہو سکے گی لہٰذا اس وقت تک سماعت مؤخر کردی جائے۔

 جسٹس اطہر سعید کا کہنا تھا کہ یہ کارروائی جلد نمٹ جاتی تو بہتر ہوتا جس پر بابر اعوان نے کہا کہ وہ تو گھڑے کی مچھلی ہیں انہوں نے کہاں جانا ہے۔

 اس پر عدالت نے کارروائی دو اپریل تک ملتوی کردی۔ کمرہ عدالت میں وکلا کی بڑی  تعداد موجود تھی جنہوں نے “یا اللہ یا غفور، بابراعوان بے قصور” کے نعروں کے اسٹکرز لگا رکھے تھے۔ سماء

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube