Wednesday, May 18, 2022  | 1443  شوّال  16

سرحدی پوسٹوں پر حملہ اقوام متحدہ کی چارٹر کی کھلی خلاف ورزی ہے،پاکستان

SAMAA | - Posted: Dec 20, 2011 | Last Updated: 10 years ago
SAMAA |
Posted: Dec 20, 2011 | Last Updated: 10 years ago

اسٹاف رپورٹ
نیو یارک : پاکستان نے نیٹو حملے پر سلامتی کونسل میں احتجاج کیا ہے اور اسے اقوام متحدہ کے چارٹر کی کھلی خلاف ورزی قرار دے  دیا ہے۔

اقوام متحدہ میں پاکستان کے قائم مقام مندوب رضا بشیر تارڑ نے اقوام متحدہ کی جانب سے افغانستان میں اسسٹنٹ مشن 

کی رپورٹ پر ہونے والی بحث میں حصہ لیتے ہوئے واضح کیا کہ افغانستان کی سرحد کے قریب پاکستانی چوکیوں پر حملہ انتہائی افسوسناک واقعہ تھا۔

یہ حملہ پاکستان کی سالمیت کے خلاف تھا جو اقوام متحدہ کے چارٹر کی خلاف ورزی ہے۔ رضا بشیر کا کہنا تھا کہ پاکستان افغانستان میں امن ، مصالحت اور استحکام کے لئے پرعزم ہے۔

الزامات سے پاک فضاء میں پاکستان مزید اہم کردار ادا کر سکتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کو افغانستان میں درپیش مسائل اور چیلنجز کا ذمہ دار قرار نہیں دیا جا سکتا۔

پاکستان پر الزامات کا سلسلہ بند ہونا چاہئے۔ رضا بشیر نے  توقع ظاہر کی ہے کہ اسسٹنٹ مشن مینڈیٹ کے ذریعے اقوام متحدہ کے پلیٹ فارم سے افغانستان میں امن اور ترقی کے لیے موثر اقدامات ممکن بنائے جا سکیں گے۔ سماء/ایجنسیز

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
Facebook Twitter Youtube