بانی ایم کیو ایم کے نام سے منسوب مقامات کے نام کی تبدیلی کی منظوری

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2016/12/Sindh-Cabinat-KHI-PKG-30-12.mp4"][/video]

کراچی : سندھ کابينہ نے بانی ایم کیو ایم کے نام سے صوبے بھر میں موجود عمارتیں، پبلک مقامات یا دیگر جگہیوں کے نام تبدیل کئے جانے کي منظوري دے دي، وزير اعلي نے این ٹی ایس پاس کنٹریکٹ ٹیچرز کو ریگولر کرنے کی منظوری بھي دی۔

وزیر اعلیٰ سندھ کی زیر صدارت سندھ کابینہ کےاجلاس ميں اہم فيصلے ہوئے بانی ایم کیو ایم اینٹی اسٹیٹ کام کرتےرہے، اس لئے صوبے بھرميں ان کے نام سے منسوب عمارتیں، پبلک مقامات یا دیگر جگہیوں کے نام تبدیل کئے جائیں گے ۔

سندھ بھر ميں درجنوں عمارتيں اور ادارے باني ايم کيوايم کے يا انکے رشتے داروں کے نام سے منسوب ہيں جنہيں تبديل کيا جائے گا، جن ميں نذيرحيسن يونيورسٹي واسپتال، خورشيد بيگم و ميموريل ہال وديگر بھي شامل ہيں ۔

اجلاس ميں فيصلہ ہوا کہ احتجاج پر بيٹھے این ٹی ایس پاس کنٹریکٹ ٹیچرز کو ریگولر کيا جائے گا ، کابینہ نے سمٹ بنک کو سندھ بنک کے ساتھ شمولیت کا بھی فیصلہ کيا۔

کابینہ نے وزیر قانون کو 15 یوم کے اندر سندھ پولیس رولز 2017 کا ڈرافٹ رولز جاری کرنے کا وقت دیا۔ سماء

CHIEF MINISTER

MURAD ALI SHAH

sindh cabinet

mqm founder

SINDH BANK

Tabool ads will show in this div