سپریم کورٹ کی حکومت کو ایک ماہ میں چیف الیکشن کمشنر مقرر کرنے کی ہدایت

Nov 30, -0001

اسٹاف رپورٹ


اسلام آباد : سپریم کورٹ نے حکومت کو ایک ماہ میں چیف الیکشن کمشنر مقرر کرنے کی ہدایت کردی، جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیئے ہیں کہ حکومت نے آئینی ذمہ داری پوری نہ کی تو مناسب حکم جاری کریں گے۔


جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں 2 رکنی بینچ نے حساس ادارے کے سول ملازم کی بحالی کیس کی سماعت کی۔


دوران سماعت درخواست گزار کے وکیل نے کہا کہ فیڈرل سروسز ٹریبونل کا سربراہ نہ ہونے کے باعث ان کا مؤکل بحال نہیں ہو پارہا، جس پر جسٹس ثاقب نثار نے کہا کہ سربراہ نہ ہونے کے باعث بہت سے ادارے غیر فعال ہوچکے ہیں، انہوں نے اٹارنی جنرل سے استفسار کیا کہ بتایا جائے ملک کے کتنے ادارے سربراہوں کے بغیر چل رہے ہیں۔


جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیئے کہ ابھی تک چیف الیکشن کمشنر بھی مقرر نہیں کیا گیا، حکومت حاضر سروس جج کو قائم مقام بناکر خاموش ہو جاتی ہے، جج صاحبان کی عدالتوں میں کئی مقدمات زیر سماعت ہوتے ہیں۔


جسٹس ثاقب نثار نے حکومت کو ہدایت کہ ایک ماہ میں چیف الیکشن کمشنر کی تقرری کی آئینی ذمہ داری پوری کی جائے، ایک ماہ میں ایسا نہ ہوا تو عدالت حکم جاری کرنے پر مجبور ہوگی۔ سماء

میں

کرنے

کی

چیف

کو

Video

ایک

hezbollah

Tabool ads will show in this div