لاہور، کم سن بچہ بدفعلی کے بعد قتل،لاش مسجد سے برآمد،پیش امام گرفتار

ویب ایڈیٹر :

 

لاہور  :  لاہور میں چھ سالہ بچے کو بدفعلی کے بعد قتل کر دیا گیا ہے، لرزہ خیز واردات کا انکشاف پوسٹ مارٹم رپورٹ سے ہوا، جس میں تصدیق ہوئی ہے کہ قتل سے قبل بچے کو بدفعلی کا نشانہ بنایا گیا تھا، غمزدہ لواحقین میت کے ساتھ سڑک پر آئے تو پورا علاقہ احتجاج میں شامل ہوگیا۔

رنج و غم سے نڈھال ماں چھ سالہ بچے کي بدنصيب ماں جسے گزشتہ روز لاہور میں قتل کیا گیا، لخت جگر سے ہونے والے انسانیت سوز سلوک پر ماں کا دل تڑپ رہا ہے، کم سن لاش گزشتہ روز مسجد کی بالائی منزل پر پھندے سے لٹکی پائی گئی۔ سفاک ملزم نے معصوم بچے کو درندگی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کیا۔ واقعہ کو کچھ اور رنگ دینے کے لیے لاش کو پھندے پر لٹکا دیا گیا۔ پولیس نے بچے سے بدفعلی اور قتل کے شبے میں سات افراد کو حراست میں لے رکھا ہے۔

واقعے کے خلاف لواحقین اور اہل علاقہ نے  احتجاج کیا اور گرین ٹاؤن کا عظمت چوک بلاک کرتے ہوئے فوري انصاف کا مطالبہ کیا۔ بچے کی  ابتدائی پوسٹ مارٹم رپورٹ  جاری کردی گئی ہے جس میں  بدفعلی ثابت ہو گئی ہے۔ معین کی سفاخانہ ہلاکت پر پورا علاقہ سراپا احتجاج ہے، اہل خانہ کا کہنا ہے کہ ملزم کو پکڑ کر سخت سے سخت سزا دی جائے۔ سماء

میں

لاہور

کے

سے

Azadi March

بعد

horse

Tabool ads will show in this div