سپریم کورٹ میں لاپتہ افراد کیس کی سماعت ۲ ہفتوں کے لئے ملتوی


اسلام آباد (اسٹاف رپورٹ) : سپریم کورٹ میں لاپتہ افراد کیس کی سماعت کے دوران، عدالت اعظمیٰ نے بیرون ملک قید پاکستانیوں سے متعلق رپورٹ پیش نہ ہونے پر اظہار برہمی کیا، وزارت داخلہ نے عدالت کو بتایا کہ چار مزید لاپتہ افراد بازیاب کرا لیئے گئے ہیں۔

جسٹس جاوید اقبال کی سربراہی میں دو رکنی بینچ کیس کی سماعت کر رہا ہے۔ دوران سماعت، جسٹس جاوید اقبال نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ سفیروں کی ذمہ داری ہے کہ وہ بیرون ملک ہر پاکستانی کے حقوق کا تحفظ کریں، ایسا نہ ہونے کی صورت میں سفیروں کو بھی طلب کیا جائے گا۔ انہوں نے ہدایت کی کہ تمام سفير ہفتے ميں ايک مرتبہ پاکستاني کميونٹي سے ملاقات کيلئے مختص کريں ، ہر سفير ايک ٹيلي فون نمبر مختص کرئے جس پر تارکين وطن ان سے رابطہ کر سکيں ۔ وزارت داخلہ کی جانب سے عدالت میں پیش کی گئی رپورٹ میں بتایا گیا کہ بازیاب کرائے گئے لاپتہ افراد میں سے تين کا تعلق پنجاب سے جبکہ ايک کا خیبرپختونخوا سے ہے۔ ڈپٹی اٹارنی جنرل، کے کے آغا نے عدالت کو بتایا کہ لاپتہ افراد سے متعلق کمیشن کی تشکیل نو جلد کر دی جائے گی، موجودہ حالت میں بھی کمیشن اپنا کام جاری رکھے ہوئے ہے سپریم کورٹ میں لاپتہ افراد کیس کی سماعت ۲ ہفتوں کے لئے ملتوی۔ سماء


میں

کی

کے

MQM

کیس

۲

Tabool ads will show in this div