پاکستان کادسعودی کوخطرے کی صورت میں بھرپورساتھ دینےکافیصلہ

اسٹاف رپورٹ


اسلام آباد : یمن کی صورت حال پر پاکستان نے فیصلہ کیا ہے کہ سعودی عرب کی سالمیت کو خطرہ ہوا تو اس کا بھرپور ساتھ دیا جائے گا۔ وزیر دفاع خواجہ آصف اور مشیرخارجہ سرتاج عزیز آج ریاض جائیں گے۔ دفتر خارجہ نے یمن میں موجود پاکستانیوں کا انخلا کی ہدایت کردی۔

یمن میں حوثی باغیوں کے خلاف سعودی عرب کے آپریشن نے پاکستانی حکام کو بھی تشویش میں مبتلا کردیا۔ وزیراعظم نواز شریف کی زیرصدارت اعلی سطح کے اجلاس میں مشرق وسطٰی کی حالیہ پیشرفت کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں آرمی چیف ، ایئر چیف۔  وزیر دفاع اور مشیر خارجہ نے بھی شرکت کی۔  

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ صورت حال کا جائزہ لینے کیلئے وزیردفاع خواجہ آصف اور مشیر خارجہ سرتاج عزیز ریاض جائیں گے، وفد میں مسلح افواج کے سینیر حکام بھی شامل ہوں گے۔ سماء سے بات کرتے ہوئے  وزیردفاع خواجہ آصف نے کہا کہ سعودی عرب پر آنچ نہیں آنے دیں گے۔

دوسری جانب دفتر خارجہ کی ترجمان تسنیم اسلم نے تصدیق کی ہے کہ سعودی عرب نے تعاون کیلئے باضابطہ رابطہ کیا ہے جس پر غور کیا جارہا ہے۔ صنعا میں پاکستانی سفارت خانہ نے حوثی باغیوں پرحملوں کیلئے جیٹ طیارے بھجوانے یا بمباری کرنے کی خبریں بے بنیاد قرار دیدیں۔ سفارت خانہ نے یمن میں موجود تین ہزار کے قریب پاکستانیوں سے محتاط رہنے کی بھی ہدایت کی ہے۔ سماء

میں

کی

Bipasha Basu

Tabool ads will show in this div