افغانستان میں سب سےزیادہ اسٹیکس پاکستان کےہیں

Aug 25, 2017
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2016/08/Fo-Isb-Pkg-25-08-1.mp4"][/video]  

اسلام آباد: دفتر خارجہ نے کہا ہے کہ امریکا کی نئی افغان پالیسی کے حوالے سے فیصلے بہت سوچ سمجھ کر کئے ہیں۔ افغانستان میں سب سے زیادہ اسٹیکس پاکستان کے ہیں ۔ واشنگٹن کو بھارتی سازشیں اور کشمیر کا مسئلہ بھی یاد دلایااوروقت کے تقاضےبتادیئے۔

ترجمان دفتر خارجہ نفیس ذکریا کی ہفتہ وار پریس بریفنگ میں ٹرمپ کی افغان پالیسی پر جوابات کی گونج جاری رہی۔ انھوں نےکہاکہ پاکستان کیلئے سب سے اہم افغانستان جبکہ خطے کے امن کیلئے مسئلہ کشمیر کا حل ناگزیر ہے۔انھوں نےبتایاکہ الزام تراشیوں پر امریکا کو کچھ یاد بھی دلا دیا۔

نفیس ذکریاکاکہناتھاکہ دہشتگردوں کے خلاف بلا امتیاز ہر طرح کی کارروائیاں کررہے ہیں،امریکی دستوں کونہ صرف زمینی امدادبلکہ فضائی راہداری بھی فراہم کی۔پاکستانی عوام نےانسداد دہشتگردی کی جنگ کی بہت بڑی قیمت ادا کی ہے۔

نفیس ذکریاکاکہناتھاکہ بھارتی انتہاپسندبھارتی اداروں میں سرایت کرچکے ہیں۔ آرایس ایس اوردیگر تنظیمیں بھارتی عدلیہ کے فیصلوں پر بھی اثر اندازہورہے ہیں۔سمجھوتہ ایکسپریس میں ملوث بھارتی انتہا پسندوں کی رہائی پر تشویش ہے۔بھارتی فوج آرایس ایس کوبھی سپورٹ فراہم کرتی ہے۔ بھارت کی جانب سے کشمیر کی جغرافیائی حیثيت تبدیل کرنے پر بھی تحفظات ہیں۔

ترجمان دفتر خارجہ نے واضح کیا کہ معاشی سرگرمیوں کا مرکز اب ایشیاء ہے،نئےحالات میں نئی شراکت داریاں بن رہی ہیں۔ دوست ممالک کو اعتماد میں لینے کیلئے پاکستان رابطے بڑھا رہا ہے ۔ سماء

FOREIGN OFFICE

Tabool ads will show in this div