کلثوم نواز کیخلاف درج کی گئی 17 سال پرانی ایف آئی آر سامنے آگئی

MZ KULSOOM NAWAZ FIR PKG 15-08 ALI

حیدرآباد: سابق وزیراعظم نواز شریف کی اہلیہ کلثوم نواز کے خلاف حیدرآباد کینٹ تھانے ميں درج 17 سال پرانی ایف آئی آر منظرعام پر آگئی ہے۔

کلثوم نواز کے خلاف مقدمہ 2000 ميں ليگی رہنما اللہ بخش مگسی کی رہائش گاہ آمد کے موقع پر اشتعال انگیز تقرير کرنے پر درج کیا گيا تھا۔

ايف آئي آر کے مطابق کلثوم نواز نے اپني تقرير ميں کارگل جنگ پر سوالات اُٹھائے۔ اُنہوں نے کہا کہ اس جنگ ميں کس جرنیل نے کیا کردار ادا کیا اور کس نے غداری کی؟ پاکستان سے بغاوت کے کیا نکات تھے؟ ہمیں غاصب جرنیلوں سے اپنا ملک بچانا ہے۔

مقدمے ميں کلثوم نواز، تہمینہ دولتانہ، اللہ بخش مگسی، حلیم صدیقی، اسماعیل راہو سمیت سینکڑوں نامعلوم افراد کو نامزد کيا گیا۔ پولیس کی جانب سے بعد ميں ایف آئی آر کو سیل کر دیا گیا تھا۔ ايس ايس پي حيدرآباد امجد شيخ کہتے ہيں مقدمے کے قانونی حيثيت کا جائزہ لے رہے ہیں۔

پيپلزپارٹي کے رہنما لطيف کھوسہ کہتے ہيں کہ کلثوم نواز کی نااہلي کے ليے يہ ايف آئي آر ہي کافي ہے۔ سما

Former PM

Kulsoom Nawaz

Kargil war

Nawaz Sharif wife

Tabool ads will show in this div