گولڑہ اسٹیشن پریادوں سے جڑی شانداربوگی

Qaid Ki Bogi Isb Pkg 14-08

اسلام آباد کے گولڑہ اسٹیشن پر ایک شاندار بوگی موجود ہے جو اب کسی ٹرین سے نہیں بلکہ یادوں کے ایک خوبصورت سلسلے سے جڑی ہے ۔ اسلام آباد کے گولڑہ سٹیشن پر کھڑی یہ شاندار بوگی ’’آر اے 38‘‘باہر سے ہی نہیں اندر سے بھی خوبصورت ہے۔اس سیلون میں بیڈ روم، ڈائننگ روم ،کانفرنس روم کے علاوہ باورچی خانہ اور دو باتھ رومز بھی ہیں۔

سیلون کے اندر عمدہ فرنیچر بھی نفاست سے رکھا ہے۔وائسرائے ہند لارڈ ماؤنٹ بیٹن اور بانی پاکستان قائداعظم محمد علی جناح اسی خوبصورت سیلون میں سفر کرتے رہے ہیں۔

اسٹنٹ ڈائریکٹر گولڑہ میوزیم کے مطابق قائداعظم نے اس کو استعمال کیا جبکہ یہ سیلون برصغیر کے آخری وائسرائے  لارڈ ماؤٹ بیٹن  کے زیراستعمال بھی رہا۔ریلوے ریکارڈ کے مطابق قائداعظم نے 1946میں کراچی سے لاہور تک کا سفر اسی میں طے کیا

یہ سیلون اب کسی کے استعمال میں نہیں لیکن قائداعظم سے جڑی یادوں نے اسے قومی ورثے کی حیثیت دے دی ۔ اس بوگی کے باہر قلیوں کی صدائیں ہیں نہ مسافروں کا ہنگامہ لیکن اس کے اندر خوبصورت یادوں کا ایک خزانہ چھپا ہے

اس بوگی ک دیکھ بھال کرنے والے بھی فخر کرتے ہیں کہ وہ بانی پاکستان کی یادگار کی حفاظت پر مامور ہیں۔ سماء

BOGGIE

quaid e azam

Jashn-e-Azadi

70th Independence day

Golra railway station

Tabool ads will show in this div