جوڈیشل کمیشن،پی ٹی آئی کاسب سےپہلےنجم سیٹھی پرجرح کافیصلہ

Nov 30, -0001

ویب ایڈیٹر:


اسلام آباد    :    پاکستان تحریک انصاف نے انتخابت میں ہونے والی مبینہ دناھدلیوں سے متعلق بنائے گئے جوڈیشل کمیشن کے سامنے پیش ہونے کیلئے حکمت عملی بنالی، پی ٹی آئی کی جانب سے جوڈیشل کمیشن کے سامنے دھاندلیوں سے متعلق سوال و جواب کیلئے سب سے پہلے نجم سیٹھی پر جرح کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

سال دو ہزار تیرہ میں ہونے والی عام انتخابات میں مبینہ دھاندلیوں کی تحقیقات کیلئے بننے والے جوڈیشل کمیشن کے سامنے کیسے پیش ہوا جائے، اس سلسلے میں پی ٹی آئی کی جانب سے حکمت علمی تیار کرلی گئی ہے، تحریک انصاف نے جوڈیشل کمیشن کے سامنے سے سے پہلے سابق نگراں وزیراعلیٰ نجم سیٹھی پر جرح کا فیصلہ کیا ہے۔ نجم سیٹھی کے بعد صحافی حامد میر اور سیاسی رہنما نبیل گبول کو بھی جوڈیشل کمیشن کے سامنے بلایا جائے گا۔

پی ٹی آئی کی جانب سے تیرہ گواہوں کو جوڈیشل کمیشن میں طلب کرنے کیلئے درخواست جمع کرادی گئی ہے، درخواست میں انتخابات کے دوران اعلیٰ عہدوں پر فائز افسران اور دیگر افراد کے بیانات ریکارڈ کرنے کی استدعا کی گئی ہے، جب کہ سابق چیف سیکریٹری پنجاب جاوید اقبال، صوبائی الیکشن کمشنر پنجاب، سندھ اور چئیرمین نادرا عثمان یوسف مبین کو بھی طلب کرنے کی درخواست کی گئی ہے۔ جب کہ گواہان کی فہرست میں نبیل گبول، حامد میر، ایم ڈی پرنٹنگ کارپوریشن کراچی، لاہور اور اسلام آباد کو بھی شامل ہیں۔ درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ کمیشن کی جانب سے اٹھائے گئے سوالات پر ان گواہان کے بیانات اہمیت کے حامل ہیں۔

تحریک انصاف کی جانب سے درخواست سینیر ایڈووکیٹ عبدالحفیظ پیرزادہ نے جمع کرائی، جوڈیشل کمیشن کی سماعت کل دوپہر ایک بجے ہوگی، پی ٹی آئی کی جانب سے شیریں مزاری اور اسحاق خاکوانی کل جوڈیشل کمیشن میں پیش ہوں گے، عمران خان کا بھی جوڈیشل کمیشن کے سامنے پیش ہونے کا امکان ہے۔ سماء                                                            

qualify

lahore airport

Tabool ads will show in this div