ایران میں خودکش حملہ و فائرنگ، 3 افراد ہلاک، متعدد زخمی

DBsyiXjXsAAJ1lS تہران : ایرانی دارالحکومت تہران میں امام خمینی کے مزار پر خودکش حملے اور پارلیمنٹ کے اندر مسلح افراد کی فائرنگ کے نتیجے میں 3 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے، ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے، فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا، امدادی کارروائیاں جاری ہیں۔

ایرانی ذرائع ابلاغ سے جاری اطلاعات کے مطابق ایرانی ذرائع ابلاغ فارس، مہر اور دیگر خبر رساں اداروں کی جانب سے فراہم کردہ اطلاعات کے مطابق ایران میں دہشت گردی کے دو واقعات رونما ہوئے ہیں، پہلا واقعہ ایرانی پارلیمنٹ میں پیش آیا، جہاں مسلح شخص نے اندر گھس کر سیکیورٹی گارڈز اور دیگر افراد پر فائرنگ شروع کردی۔

dc-Cover-u3fgp3jvuicjn5ec9c6hr9tn83-20160310211240.Medi ٹیلی گرام کے مطابق حملہ آور نے ایک گارڈ کی ٹانگ پر گولی مار اور بھاگ گیا، تاہم دیگر ذرائع ابلاغ سے جاری اطلاعات کے مطابق فائرنگ سے متعدد افراد زخمی ہوئے، ایرانی پارلیمنٹ کے اندر لوگوں کو یرغمال بنائے جانے کی بھی اطلاعات ہیں۔

_e9efe22a-4b49-11e7-942b-1b07039b2a8c

دہشت گردی کا دوسرا واقعہ امام خمینی کے مزار پر پیش آیا، جہاں خود کش حملہ آور نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا، جب کہ دیگر دو حملہ آوروں کو گرفتار کرلیا گیا ہے،  مزار کے ساتھ ملحقہ سب وے کو سیکیورٹی خدشات کی بنا پر بند کردیا گیا ہے، مزار پر حملہ کرنے والے مسلح افراد نے مزار پر حاضری دینے والوں پر جدید ہتھیاروں سے فائرنگ  بھی کی۔

59379e63c361880b2b8b45c2

تازہ اطلاعات کے مطابق ایرانی پارلیمنٹ میں فائرنگ اور امام خمینی کے مزار پر خود کش حملے میں 3 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے ہیں، ہلاکتوں میں اضافے کا بھی خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے۔ سماء

iranian parliament

held hostage

gunman attack

Tabool ads will show in this div