سندھ کا بجٹ آج پیش کیا جائے گا

ویب ایڈیٹر:


کراچی:سندھ کا آئندہ مالی سال کا بجٹ پیش آج کیا جارہا ہے۔ بجٹ کا کل تخمینہ 730 ارب روپے سے زائد ہو گا جبکہ بجٹ خسارہ 4 سے 5 ارب روپے ہو گا۔

سالانہ ترقیاتی پروگرام کےلیے 162 ارب روپے مختص کیے جارہے ہیں۔ نئے بجٹ میں 590 نئے منصوبے شامل کیے گئے ہیں۔ صوبائی وزیر خزانہ مراد علی شاہ بجٹ پیش کریں گے۔

آئندہ مالی سال کے لیے 162 ارب روپے کے سالانہ ترقیاتی پروگرام کے590 نئے منصوبوں میں کراچی کے لیے صرف7 اسکیموں کو منتخب کیا گیا ہے۔ نئے بجٹ میں شامل منصوبوں میں نکاسی آب کے منصوبے ایس تھری، پانی کے منصوبے کے فور کیلئے رقم رکھی گئی ہے جبکہ مہران ہوٹل کے ساتھ نصرت بھٹو انڈر پاس منصوبے کے علاوہ کورنگی کراسنگ پر فلائی اوور پل کی تعمیر کا منصوبہ اور ٹرانسپورٹ کی 2 اسکیمیں اورنج لائن اورریڈ لائن کے لیے رقم مختص کی گئی ہے ۔

کراچی میں ٹرانسپورٹ کے مزید3 منصوبے بھی ہیں جس میں ایک وفاقی حکومت،ایک بحریہ فاؤنڈیشن اور ایک منصوبہ چائنیز کمپنی مکمل کرے گی۔

منی پاکستان کراچی نہ صرف سندھ کا کاروباری حب ہے بلکہ ملک کی معیشت میں سب سے زیادہ حصہ دینے والا شہر بھی ہے،سندھ حکومت نے وفاقی بجٹ میں کراچی کو نظر انداز کیے جانے کے بہت شکوے کیے لیکن بجٹ میں کراچی کی اہم اسکیم سرکلر ریلوے کیلئے رقم مختص کی نہ ہی شہر کے داخلی اور خارجی راستوں پراسکینرنصب کرنے کیلئے کوئی منصوبہ بجٹ میں شامل کیا۔ سماء

sind

circular railway

Tabool ads will show in this div