طیبہ تشدد کیس میں اہم موڑ، جج راجہ خرم مشکل میں

IHC TAYABA CASE ISB PKG 28-04

اسلام آباد : طیبہ تشدد کیس میں او ایس ڈی جج راجہ خرم علی خان محکمانہ انکوائری میں قصور وار قرار دے دیا، جسٹس محسن اختر کیانی نے سخت سزا کی سفارش کرتے ہوئے معاملہ چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ کو بھجوا دیا اور خود کیس کی سماعت سے الگ ہوگئے۔

طیبہ تشدد کیس میں اہم موڑ، رجسٹرار ہائیکورٹ کی انکوائری کے بعد محکمانہ انکوائری میں بھی او ایس ڈی جج راجہ خرم کا جرم ثابت ہوگیا، جسٹس محسن اختر کیانی نے سخت سزا کی  سفارش کے ساتھ معاملہ چیف جسٹس کو بھجوادیا۔

جسٹس کیانی نے ریمارکس دیئے کہ اب ملزم کی قسمت کا فیصلہ متعلقہ اتھارٹی کو کرنا ہے۔

جسٹس محسن اختر کیانی نے مقدمے کا ٹرائل بینچ تبدیل کرنے کی ملزمان کی درخواست منظور کرلی اور نئے بینچ کی تشکیل کیلئے معاملہ چیف جسٹس ہائیکورٹ کو بھجوادیا۔

درخواست میں کہا گیا تھا  کہ جسٹس محسن اختر کیانی ملزم راجہ خرم علی خان کے کیخلاف محکمانہ انکوائری کرچکے ہیں، اس لئے ٹرائل نہیں کرسکتے۔ سماء

MINOR GIRL

Tayyeba Tortured Case

Judge Raja Khurram

OSD Judge

Maid Torture Case

Tabool ads will show in this div