غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کیخلاف پشاور کے ڈنڈا بردار شہری سڑکوں پر

Nov 30, -0001

اسٹاف رپورٹ:

پشاور: رمضان المبارک میں کم سے کم لوڈ شیڈنگ  کرنے کے حکومتی وعدے تو وفا نہ ہوئے لیکن صوبائی دارالحکومت میں لوڈشیڈنگ کے ستائے شہری سڑکوں پر آ گئے۔ ڈنڈابردارمظاہرین نے واپڈاہاؤس کے باہرشدید احتجاج کیا۔


پشاورکے نواحی علاقہ ارمڑکے علاقہ مکین رمضان المبارک میں غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ سے تنگ آئے تواپنا غصہ نکالنے واپڈا ہاؤس پہنچ گئے جہاں انہوں نے لاٹھیاں دکھائیں اورپولیس کے ساتھ خوب گرما گرمی بھی  کی۔

مظاہرین نے احتجاجا مشیر وزیراعظم امیرمقام کو بھی واپڈا ہاؤس جانے سے روک دیا ۔ مظاہرین کا کہناتھا کہ نہ صرف سحروافطار کے اوقات میں بجلی غائب رہتی ہے بلکہ سارادن ہی بجلی کی آنکھ مچولی نے جینا محال کردیا ہے ۔ لوڈشیڈنگ پرقابو نہ پایا گیا تو وہ پرتشدد احتجاج پرمجبورہوجائیں گے۔

دوسری جانب ترجمان پیسکو کا کہنا تھا کہ بجلی چوری کی وجہ سے 80 فیصد لاسزکا سامنا ہےجب تک کنڈے نہیں ہٹائے جاتے لوڈشیڈنگ پرقابونہیں پایا جاسکتا۔ ترجمان پیسکو کے مطابق بجلی چوری کرنے والے علاقے کے رہائشی ہی احتجاج کررہےہیں لیکن جہاں کنڈے ہوں گے وہاں لوڈشیڈنگ کی جائے گی۔ سماء

load shedding

wapda house

Tabool ads will show in this div