چارہزارآٹھ سو ارب روپےسے زائد کا وفاقی بجٹ آج پیش ہوگا

budget

اسلام آباد : تاریخ میں پہلی بار نواز حکومت پانچواں بجٹ پیش کرے گی، چار ہزار آٹھ سو ارب روپے سے زائد کا وفاقی بجٹ آج قومی اسمبلی میں پیش ہوگا، وزیر خزانہ اسحاق ڈار آئندہ مالی سال کا بجٹ ایوان میں پیش کریں گے۔ بجٹ آرہا ہے اور ہمیشہ کی طرح مہنگائي بھی لارہا ہے، ايک دو نہيں سيکڑوں درآمدی اشیاء پر کسٹمز، ریگولیٹری ڈیوٹی میں اضافہ ہوگا، زراعت کے شعبے کي بات کريں تو يہاں سیلز ٹیکس کی شرح میں کمی کی جائے گی، جب کہ نان فائلرز سے چاليس ارب روپے اضافي ٹيکس ليا جائے گا۔

قالین اور چمڑے کی مصنوعات بنانے والے ٹيکس سے مسثنيٰ ہونگے، سیکیورٹی اخراجات کیلئے سپر ٹیکس سے تیس ارب آمدن متوقع ہے، وفاقی ترقیاتی منصوبوں کیلئےایک ہزار ایک ارب روپے رکھنے کی تجویز ہے۔ معاشی ترقی اور مہنگائی کا ہدف چھ فیصد مقرر کیا گیا ہے۔ سرکاري ملازمين کي تنخواہوں ميں دس سے پندرہ فيصد اضافہ بھي متوقع ہے، جس کیلئے بالترتیب 395 اور 275 ارب روپے مختص کئے جا رہے ہیں۔ سماء

Sales Tax

budget 2017

regulatory

Tabool ads will show in this div