نایاب چرندپرندکی آن لان منڈی

Online Animal Trade Lhr Pkg 23-05

لاہور: سوشل ميڈيا ناياب جانوروں کي آن لائن منڈي بن گيا۔ڈبليوڈبليوايف نے جانوروں کي غيرقانوني تجارت کرنےوالي چودہ ويب سائٹس اورمتعددفيس بُک پيجزکي نشاندہي کردي۔

آن لائن منڈی میں سب کچھ بکنےلگا۔ناياب قسم کا بچھو چاہئيےيا شير پالنے ميں دلچسپي ہے،معدوم ہوتے پرندے اور جانور، سب ہي آن لائن بکتےہيں۔

ڈبليو ڈبليو ايف کي  تحقيق ميں بتايا گيا ہے کہ سوشل ميڈيا کي غيرقانوني منڈي ميں زندہ جنگلي جانوروں کو پالتو جانوروں کے طور پر بيچاجارہاہے۔

سوشل ميڈيا پر پرندوں کي خريد وفروخت بھي کي جاتي ہےجو قانوني ہے مگر بُہت سے لوگ اس آڑ ميں اُن چرند پرند کا کاروبار بھي کر رہے ہيں جن کي نسلوں کو خطرہ لاحق ہے۔يہاں ہزاروں سے کروڑوں روپے تک کے سودے طےہوتےہيں۔

يہ کاروبارکرنےوالےافراد کا نام اور پتہ کہيں درج نہيں ہوتا، صرف چيٹ کے ذريعے ہي معاملات طے پاتے ہيں۔اس ہی لئےان کوٹريس کرنا مُشکل ہے۔ سماء

WWF

online animal trade

Tabool ads will show in this div