طوفانی بارشوں سے تین صوبوں کے ندی نالوں میں طغیانی

ویب ایڈیٹر:

کراچی:سندھ، پنجاب اور خیبرپختونخوا کے مختلف علاقوں میں طوفانی بارشیں ,ندی نالوں میں طغیانی آگئی ۔ علی پور اور جتوئی میں سیلابی ریلوں کے باعث 7افراد جان سے چلے گئے ۔ کرک میں 2نوجوان برساتی نالے میں ڈوب گئے۔

دریائے سندھ بپھرا تو مظفرگڑھ کی تحصیل علی پوراور جتوئی میں 7 افراد جان سے گئے جبکہ سیلاب کے باعث راجن پورکاروجھان شہر سے رابطہ منقطع ہے۔

حافظ آباد میں نشیبی علاقوں میں پانی جمع ہو گیا۔ ساگرمیں 100 سالہ قدیم پل منہدم ہونے سے 20 دیہات کا رابطہ منقطع ہو گیا۔گھوٹکی میں کچے کے مزید 40 دیہات زیرآب آ گئے،کندھ کوٹ اور کشمور میں بھی صورتحال اس سے مختلف نہیں۔

منڈی بہاؤالدین میں بھی برساتی پانی شہر میں جمع ہونے کے باعث لوگ گھروں میں محصور ہیں۔

خیبر پختونخوا میں بھی بارش کے باعث نوشہرہ کےبرساتی نالے بپھرگئے ہیں جس کے باعث قریبی آبادیوں کو شدید خطرہ لاحق ہو گیا ہے۔

ایبٹ آباد شہرکے گردو نواح میں بارش کے باعث لینڈ سلائیڈنگ کی وجہ سے نتھیا گلی سے بکوٹ جانے والے شاہراہ بندہو گئی جبکہ کوہاٹ میں بھی تیز بارش اوربرساتی نالوں میں طغیانی کے باعث پانی گھروں میں داخل ہوگیا اورسڑکیں زیرآب آگئیں۔

چارسدہ میں بھی موسلا دھار بارش سےدریاؤں میں پانی کی سطح بلند ہوگئی۔ کرک میں طوفانی ہواؤں کے ساتھ موسلا دھار بارش سے فصلیں تباہ ہو گئیں،دو نوجوان برساتی نالے میں ڈوب گئے جبکہ درجنوں مکانات تباہ ہوگئے۔ سماء

KPK

PUNJAB

LAND SLIDING

sind

HEAVY RAIN

Tabool ads will show in this div