راناثنااللہ نےسانحہ ماڈل ٹاؤن کومس ہینڈلنگ کانتیجہ قراردیدیا

اسٹاف رپورٹ


اسلام آباد : سابق وزیر قانون رانا ثنااللہ نے سانحہ ماڈل ٹاؤن کو مس ہینڈلنگ کا نتیجہ قرار دیا ہے، کہتے ہیں سبکدوشی کیلئے پارٹی کا فیصلہ درست ہے،جسے وہ دل سے تسلیم کرتے ہیں۔ پیپلز پارٹی کے سینیٹر اعتزاز احسن کہتے ہیں رانا ثنااللہ کو قربانی کا بکرا بنایا گیا۔

سابق وزیر قانون پنجاب رانا ثنااللہ مستعفی ہوئے تو واقعے کا ذمہ دار انتظامیہ اور اہلکاروں کو ٹھہرا دیا۔ کہتے ہیں سانحہ ماڈل ٹاؤن موقع پر موجود انتظامیہ اور اہلکاروں کی مس ہینڈلنگ کا نتیجہ ہے۔

سما سے گفت گو کرتے ہوئے رنا ثنااللہ نے کہا ان کی سبکدوشی وزیراعلیٰ کا درست فیصلہ ہے، جسے وہ دل سے تسلیم کرتے ہیں، یہ فیصلہ سانحہ کی شفاف تحقیقات میں موثر پیش رفت ہے، رانا ثنا کہتے ہیں انہیں یقین ہے کہ سانحہ کسی سازش یا منصوبہ بندی کا نتیجہ نہیں ہے۔ پیپلز پارٹی کے سینیٹر اعتزاز احسن کہتے ہیں رانا ثناء اللہ اور وزیراعلیٰ پنجاب کے سیکریٹری کو قربانی کا بکرا بنایا گیا۔

کراچی میں صحافیوں سے گفت گو میں ان کا کہنا تھا کہ لاہور کا واقعہ اتنا بڑا ہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب کو خود استعفیٰ دینا چاہیے تھا، پوری دنیا کو پتہ تھا مگر وزیراعلیٰ لاعلم تھے۔ اعتزاز احسن کا کہنا تھا پیپلز پارٹی چاہتی ہے حکومت پانچ سال مکمل کرے مگر حکومت خود مدت پوری کرنا نہیں چاہتی۔ سماء

bond

shrines

Tabool ads will show in this div