سوئٹزر لینڈ لوٹی دولت کی معلومات دینے پر تیار

Mar 08, 2017

Ishaq Dar Pc Isb 21-12 اسلام آباد : وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے کہا ہے کہ سوئٹزرلینڈ کے ساتھ سوئس بنکوں میں رقوم کی معلومات تک رسائی کے حوالے سے معاہدے کو دونوں ممالک کے درمیان بات چیت کے ذریعے تسلیم کرلیا گیا ہے۔

قومی اسمبلی میں پالیسی بیان دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عالمی یوم خواتین کے موقع پر خواتین نے جن خیالات کا اظہار کیا ہے میں ان کے فنڈز سمیت تمام مطالبات تسلیم کرتا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ 2005ءمیں پاکستان نے سوئٹزرلینڈ کے ساتھ ڈبل ٹیکسیشن کا معاہدہ کیا تھا۔ 2013ءمیں جب ہماری حکومت آئی تو کابینہ میں سمری کے ذریعے سوئٹزرلینڈ کے ساتھ معلومات کے تبادلے کے حوالے سے معاہدہ کرنے کی اجازت طلب کی گئی، سمری میں سوئٹزرلینڈ کے بنکوں میں پاکستانیوں کی رقوم کا حوالہ بھی دیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے سوئس حکام سے رابطہ کیا۔

انہوں نے ٹیکسوں میں مراعات سمیت دیگر مطالبات کئے اور کہا کہ ہم اس کے بعد معاہدہ کریں گے۔ وزیرخزانہ نے کہاکہ سوئٹزرلینڈ کو ایم ایف این کا درجہ دینے سمیت ٹیکسوں کی شرح میں کمی نہیں کی جائے گی، سوئٹزرلینڈ نے ہماری شرائط پر نیا معاہدہ کرنے پر آمادگی ظاہر کی ہے اور اس حوالے سے خط دو مارچ کو ہمیں موصول ہوا ہے۔ 21 مارچ کو اس معاہدہ پر دستخط ہونگے۔

معاہدہ کے حوالے سے ہم نے ساڑھے تین سال کی محنت کی ہے اور کابینہ کی منظوری کے بعد 2014ءمیں ہم نے او ای سی ڈی کی رکنیت کی درخواست دی۔ اس حوالے سے ان کے ساتھ کئی اجلاس ہوئے۔

وزیرخزانہ نے کہاکہ جون 2016ءمیں جب ہم نے فنانس بل منظور کرکے بھیجا تو انہوں نے کہا کہ 14 ستمبر 2016ءکو اس پر دستخط ہو چکے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ او ای سی ڈی ملٹی لیٹرل کنونشن سوئس معاہدے سے زیادہ بہتر ہوگا اور معلومات کے تبادلے سے پاکستان پر اس کے مثبت اثرات مرتب ہونگے۔ سماء

finance minister

agreement

bank accounts data

Tabool ads will show in this div