فاٹا میں ایف سی آر کو ختم کرنے کا فیصلہ

Sartaj Aziz Presser Isb Pkg 25-02

اسلام آباد: مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے کہا ہے کہ فاٹا اصلاحات میں 5 سال میں عملدرآمد یقینی بنایا جائے گا،فاٹا میں ایف سی آر کو ختم کرنے فیصلہ کیا گیا ہے۔

سرتاج عزیز نے کہا ہے کہ ایف سی آرکو نئے رواج ریگولیشن سے تبدیل کردیا جائے گا، 30 اپریل تک نقل مکانی کرنیوالوں کی واپسی یقینی بنائی جائیگی، فاٹا کیلئے گورننگ کونسل کی تشکیل کی سفارش کی گئی۔

سرتاج عزیز نے کہا کہ فاٹا سے ارکان اسمبلی اور سینیٹرز کونسل کے رکن ہونگے،فاٹاڈیولپمنٹ کمیٹی بنانے کابھی فیصلہ ہواہے، گورنرخیبرپختونخوا کمیٹی کےچیئرمین ہوں گے،کمیٹی میں فاٹاکےاراکین سینیٹ وقومی اسمبلی شامل ہوں گے۔

انہوں نے کہا کہ علاقے کی سیکیورٹی کیلئے خصوصی اقدمات کیےگئےہیں،پولیس کے نظام کیلئے لیویزمیں20 ہزارنھی بھرتیاں ہوں گی،ایف سی کانیاونگ تشکیل دیا جائے گا،استعدادکار بڑھادی جائے گی،اصلاحات کے مطابق قانون سازی کی جائےگی۔

سرتاج عزیز نے بتایا کہ فاٹامیں ملازمت کرنیوالوں کی تنخواہیں اورمراعات20فیصدزیادہ ہونگے،فاٹا کو سی پیک سے منسلک کرنا یقینی بنایا جائےگا،تعلیم اورصحت کےاداروں میں فاٹاکےطلباکاکوٹہ بڑھایاجائیگا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ 2018 کےانتخابات کے بعد فاٹا میں بلدیاتی انتخابات کرائے جائیں گے، فاٹامیں مقامی حکومتوں کے آڈٹ کو یقینی بنایا جائے گا، فاٹاکیلئےپی ایس ڈی پی کےعلاوہ اضافی بجٹ مختص ہوگا۔ سماء

KPK

sartaj aziz

Tabool ads will show in this div