پانامہ کیس کےفیصلے کےبعدحکومت کی شکل نہیں دیکھناہوگی

Feb 22, 2017
Imran Khan Talk Bani gala 22-02 [video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2016/02/Imran-Khan-Talk-Bani-gala-22-02.mp4"][/video]  

اسلام آباد: تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان نے امید ظاہرکی ہےکہ کل پانامہ کیس کا فیصلہ آجائےگا اوران کاچہرہ نہیں دیکھناپڑےگا۔

بنی گالہ کےباہر پانامہ کیس سے متعلق میڈیا سے بات کرتےہوئےعمران خان نے امید ظاہرکی کہ پانامہ کیس کے فیصلے کے بعد زیادہ دیرتک حکومت کوبرداشت نہیں کرناپڑےگا۔عمران خان نےکہاکہ انصاف کےادارےسب کےسامنےبےنقاب ہوچکےہیں۔ انھوں نے کہاکہ مغرب ميں ادارے مضبوط ہيں،پاکستان میں ایسا نہیں ہے۔حکومت نے نےتمام اداروں کوتباہ کردیا ہے۔

عمران خان نے سپریم کورٹ کے باہر اور اندرصحافیوں کےساتھ بدسلوکی  سخت مذمت کرتےہوئے کہاکہ حکومتی ارکان کو نظر آرہا ہے ان کے حالات برےہیں۔

عمران خان نے کہاکہ سپریم کورٹ میں ٹھيک بات کي گئي کہ کل نيب کا جنازہ نکل گيا تھا،يہ چھوٹےچھوٹے لوگوں سے پيسے نکلواتے ہيں۔ان لوگوں نے ہمارے ملک ميں کاروبارکونقصان پہنچايا۔

عمران خان نےکہاکہ نيب اور ايف بي آر کي وجہ سےملک ميں بزنس کا نقصان ہوا۔ نيب شريف خاندان کو بچانے ميں لگاہوا ہے۔ چئیرمین پی ٹی ائی نے کہاکہ ادارے ايسے ہي تباہ نہيں ہوئے، تباہ کيے گئے۔انہيں مزيد چھ بارياں دے ديں، ادارے اور بھي تباہ ہوں گے۔

عمران خان نےبتایاکہ کے پي ميں پوليس بھرتي کے دوران پيسے نہيں بنائے جاتے۔کوئي کے پي ميں نہيں کہتا کہ رينجرز کي ضرورت ہے۔ عمران خان نےدعوی کیاکہ انھیں بليک ميل کرنے کيلئے کيس اليکشن کميشن بھيجا گيا۔

پانامہ کیس سے متعلق عمران خان نے مزیدکہاکہ تين مہينے ميں فيصلہ کرنا تھا ليکن پانچ مہينے ميں بھي نہ کرسکے۔اصل کاغذات ميں مريم نواز بينفشل آنر ہيں،ن لیگ والےاصل کاغذات نہيں دکھارہے۔ سماء

IMRAN KHAN

Panama leaks

panama case

Tabool ads will show in this div