سانحہ سیہون ، ہندوں برادری بھی غم سے نڈھال

MPK HINDU BIRADRI PKG 17-02

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2016/02/MPK-HINDU-BIRADRI-PKG-17-02-.mp4"][/video]

سیہون : حضرت لعل شہباز قلندر سے غيرمسلم بھي عقيدت رکھتے ہيں، بھائي چارے کا پيغام دينے والے بزرگ کي درگاہ پر ميرپورخاص کے راجيش اور ديپک بھي حاضري دينےگئے تھے مگر واپس نہ آئے۔ لعل شہباز قلندر سے عقیدت صرف مسلمانوں کی نہیں ہندوؤں کی بڑی تعداد بھی ان کے چاہنے والوں میں سے ہے ۔

ہندو برادری کے بھی تین جوان میرپورخاص سےزیارت کے لئے سیہون گئے لیکن واپس لاشیں آئیں مرنے والوں میں دو بھائی اور ایک کزن تھا۔

راجیش اوردییپک کی دوماہ بعد شادی تھی ورثاء بھی پیاروں کی جدائی پر غم سے نڈھال ہیں۔

علاقے کی فضاء سو گوار کاروباری مراکز بھی بند تھے، تینوں نوجوانوں کی آخری رسومات ادا کردی گئیں ۔ سماء

hindu community

sehwan Blast

Tabool ads will show in this div