خودکش حملہ آور منشیات پھر بھتے کی کالز، انکشاف

Justice Dost Mohammad Isb Pkg 17-02

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2016/02/Justice-Dost-Mohammad-Isb-Pkg-17-02.mp4"][/video]

اسلام آباد: سپریم کورٹ کے جسٹس دوست محمد نے انکشاف کیا ہے کہ سترفیصد منشیات کے علاوہ بھتے کی کالز بھی افغانستان سے آتی ہیں، بھتے کی رقم کی ادائیگی جلال آباد کے قریب ایک گاؤں میں ہوتی ہے۔

افغان بھتہ خوروں نے سپریم کورٹ کے جج جسٹس دوست محمد سے بھی بھتہ مانگا، ایک ماہ پہلے افغانستان سے کال آئی کہ آپ آئے نہ پیسے بھیجے، اب ہم بندے بھیج رہے ہیں۔

جسٹس دوست محمد نے تعارف کروانے کا بولا تو بھتہ خورکو سمجھ آئی کہ یہ تو رانگ نمبر ہے، یہ انکشاف خود جسٹس دوست محمد نے منشیات اسمگلنگ کے مقدمے کی سماعت کے دوران کیا۔

انہوں نے کہا کہ بولے بھتے کی ادائیگی جلال آباد کے قریب ایک گاؤں میں ہوتی ہے، دہشتگردوں کو پچاس فیصد سے زائد فنڈنگ کا ذریعہ بھی منشیات ہے۔

جسٹس دوست محمد کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے منیشات کے اسمگلرز علاوالدین اور جلال الدین کی عمر قید کے خلاف اپیلیں مسترد کر دیں۔ سماء

PHONE CALL

justice dost muhammad

Tabool ads will show in this div