اور وہ چلا گیا

TAIMOOR OFFICE MEMORIES KHI PKG MEHROZ 13-02 اس کی نظریں بھیڑ میں مجھے ڈھونٹتی ہوئی دکھائی دیں۔ میں نے اسے دیکھ لیا تھا کہ وہ مجھے ہی تلاش کر رہا ہے۔ فرئیر ہال کے احاطے میں سجے ایٹ فیسٹیول کے اندر میں  نے اپنا بیگ ۔۔شال اور مائیک سنبھالتے ہوئے اسے دور سے ہاتھ کا اشارہ کیا۔۔۔ مجھے دیکھ کر اس کے چہرے پر پیاری سی مسکراہٹ آئی۔۔اور پھر نہایت عجلت کے ساتھ وہ میرے قریب آ گیا۔ میں نے سوالیہ نظروں سے اسے دیکھا۔۔ دبی دبی اور شرارتی مسکراہٹ لیے اس نے کہا۔ SAMAA TARGET TAIMOOR 1200 KHI PKG 13-01 شہلا باجی آپ ادھر کھڑی ہیں اور وہاں ہمارا ڈرائیور چائے پراٹھے پر ہاتھ صاف کیے جا رہا ہے، دیکھ لیں اس نے سب ختم کر دینا ہے۔ میری ہنسی چھوٹ گئی۔۔میں نے کہا تیمور کوئی بات نہیں ہم اور خرید لیں گے یار۔۔اس میں کونسی بڑی بات ہے۔۔اس نے کہا نہیں میں اس لیے کہہ رہا تھا آپ نے پی ٹی سی کرنا تھا نہ کچھ کھاتے ہوئے۔۔(رپورٹنگ میں صحافی رپورٹ کے آخر میں کیمرے کے سامنے اپنی رائے دیتا ہے اسے الیکڑانک میڈیا کی زبان میں پی ٹی سی کہتے ہیں۔) تیمور کی اس چھوٹی سی فکر پر مجھے اس پیارے لڑکے پر بہت پیار آیا۔۔یہ تیمور کے ساتھ میری آخری شوٹ تھی۔ TAIMOOR STILL LOOP 03 12-02 وہ تھا ہی اتنا پیارا بظاہر اپنے کام سے کام رکھنے والا لیکن اپنے اطراف کی خوب خبر رکھتا تھا، میرے ساتھ جب بھی کسی شوٹ پہ جانا ہوا تو تیمور غیر محسوس انداز سے ہمیشہ میرے آس پاس ہی رہتا تھا کہ کوئی مجھے تنگ نہ کرے یا مجھے کسی مدد کی ضرورت نہ پڑے۔۔مجھے اس کا یہ انداز بہت بھاتا تھا کہ اس عمر میں تو لڑکے لا ابالی سے ہوتے ہیں۔ کہاں کوئی کسی غیر کی پرواہ کرتا ہے۔۔ ڈیڑھ برس ساتھ رہا ہمارا۔۔روزانہ کا ملنا جلنا۔ کام میں ساتھ رہنا ۔۔کوئی رشتہ نہ ہوتے ہوئے بھی ایک انسیت سی ہو جاتی ہے اپنے اس پاس کے لوگوں سے تیمور سے بھی مجھے ایسی ہی انسیت تھی۔ TAIMOOR HOME 01 12-02 میں جب بھی اس لڑکے کو دیکھتی تھی میرے دل میں ہمیشہ یہی خیال آتا تھا کہ یہ ڈی ایس این جی اسٹنٹ جیسی چھوٹی موٹی جاب اس لائق اور محنتی لڑکے پر بلکل نہیں جچتی۔۔یہ بات تیمور کو کہنے کی تو کھبی ہمت نہیں ہوئی لیکن دل ہی دل اس کی کامیابی کے لیے دعا ضرور کرتی تھی۔۔کیونکہ مجھے اس کا میرے لیے قابل احترام انداز سے شہلا باجی کہنا بہت اچھا لگتا تھا۔۔تیمور کے بہت خواب تھے اپنے گھر کے حالات بدلنے کے۔۔ماں کو اپنا گھر لے کر دینا تھا جو ایک عرصے سے کرایے کے مکان میں رہ رہی تھی۔۔ایک بڑی بہن وہ بیاہ چکا تھا اور دوسری کو بیاہنے کی تیاری میں تھا، اسی لیے تو ڈبل جاب کرتا تھا کہ بہن کی شادی دھوم دھام سے کرنی ہے۔ Taimoor Dead Body Arrival Paposh Qabristan Khi 13-02

لیکن صرف ایک گولی نے تیمور کے خاندان سے اکلوتا چشم و چراغ چھین لیا۔۔ اپنی زندگی بدلنے کے سارے خواب چکنا چور ہو گئے۔۔وہ پیارا لڑکا سب کو روتا چھوڑ کر اللہ کو پیارا ہو گیا۔۔اور جب تیمور کی شہادت کے اگلے دن میں تیمور کی ماں کو دلاسہ دے رہی تھی تب انہوں نے مجھ سے سوال کیا۔

Taimoor Khuwab Family PKG 13-02 RAHEEL

شہلا باجی کہتا تھا تمہیں تیمور۔۔ تمہارے ساتھ ہی کام کرتا تھا نہ؟ تو پھر آج تم اپنے ساتھ کیوں نہیں لائی اسے؟، ایک بے بس اور بیٹے کی یاد میں تڑپتی ماں کے اس سوال پر میرے پاس سوائے آنسوں کے کوئی جواب نہیں تھا۔ سماء

KARACHI KILLING

terrorist attack

Sehwan Sharif

SAMAA DSNG Van Firing

taimoor khan

attack on Samaa TV

Tabool ads will show in this div