سانحہ ماڈل ٹاؤن، 4 پولیس اہلکار گرفتار، ڈی آئی جی رانا عبدالجبار ملزم نامزد

اسٹاف رپورٹ

لاہور : سانحہ ماڈل ٹاؤن ميں گرفتار کئے جانیوالے ايس ايچ او سميت 4 پوليس اہلکاروں کو انسداد دہشت گردی کی عدالت نے 5 روزہ جسمانی ريمانڈ پر پوليس کے حوالے کرديا، جوڈیشن ٹریبونل کی کارروائی کے دوران وزیراعلیٰ شہباز شریف اور رانا ثناء اللہ سمیت مختلف افسروں کے ٹیلی فون ریکارڈ پیش کردیئے گئے۔

ماڈل ٹاون آپريشن ميں زيرحراست 4 پوليس اہلکاروں کو باضابطہ گرفتاری کے بعد انسداد دہشت گردی کی عدالت ميں پيش کيا گيا۔

عدالت نے چاروں اہلکاروں کا 5 روزہ جسمانی ريمانڈ ديتے ہوئے ملزمان کو دوبارہ 19 جولائی کو پيش کرنے کا حکم ديا ہے، ايس پي سيکيورٹی علی سلمان کو بھی او ايس ڈی بناديا گيا ہے۔

انچارج ايليٹ فورس نے بيان ديا تھا کہ ماڈل ٹاؤن آپريشن کے دوران علی سلمان کے حکم پر فائرنگ کی گئی، ذرائع کے مطابق سابق ڈی آئی جی آپريشنز رانا عبدالجبار نے ممکنہ گرفتاری سے بچنے کیلئے انسداد دہشت گردی عدالت ميں عبوری ضمانت کی درخواست دے دی ہے۔ سماء

India vs Pakistan

جی

آئی

ڈی

nepra

defence

conflict

weapons

proof

Tabool ads will show in this div