سندھ اسمبلی میں اردو سندھی تنازع کی گونج

SA Urdu Sindh Clash khi Pkg 01-02 khurram

کراچی : سندھ اسمبلي ميں اردو سندھي تنازع کي گونج سنائي دي، ايم کيوايم کے رکن نے اردو بولنے والوں کو نوکريوں سے برطرف کرنے کا معاملہ اٹھاديا، اس سے پہلے کے تنازع شدت اختيار کرتا ڈپٹي اسپيکر نے اجلاس برخاست کرديا۔

رکن سندھ اسمبلي متحدہ قومي موومٹ پاکستان ڈاکٹر ظفرکمالي نے کہا کہ تمام مہاجروں کو ميرپورخاص بورڈ آفس میں نوکريوں سے برطرف کيا گيا۔

ايم کيوايم پاکستان کے رکن ڈاکٹر ظفرکمالي نے سندھ اسمبلي ميں نکتہ اٹھايا تو ڈپٹي اسپيکر نے مائک بند کرديا، نثار کھوڑو پوائنٹ آف آرڈر سن کر جوش ميں آگئے۔

وزيربرائے پارليماني امور سندھ نثار کھوڑو نے کہا کہ ہم کسي سے تفريق نہيں کرتے، يہ اردو اور سندھي کا مسئلہ نہيں ہے، ہم سب سندھي ہيں، ايم کيوايم پاکستان کي پاليسي بھي يہي ہے کہ ہم اردو بولنے والے سندھي ہيں، اگر نہيں ہے تو بتاديں۔

سندھ ميں پارليماني امورکے وزير کي بات سن کر ايم کيوايم کي بنچوں پر شور مچ گيا، ايک اردو بولنےوالي خاتون ڈپٹي اسپيکر کي بات سن کر نثار کھوڑو نے بھي لقمہ ديا۔

ڈپٹي اسپيکر، سندھ اسمبلي شہلارضا نے کہا کہ ظفرکمالي صاحب آپ بيٹھ جائيں، يہ کہيں ثابت نہيں ہوتا کہ جو ہجرت کرکے آئے ہيں، وہ صرف اردو اسپيکنگ ہيں۔

شہلارضا نے ترک وطن اور ہجرت کا فرق بيان کرتے ہوئے اسمبلي کا اجلاس برخاست کرديا۔ سماء

Sindh assembly

sindhi

MQM Pakistan

Tabool ads will show in this div