سپریم کورٹ کا افتخار چوہدری کو عمران خان سے متعلق ریکارڈ دینے سے انکار

اسٹاف رپورٹ

کراچی : بدلتا ہے رنگ آسماں کیسے کیسے، سپریم کورٹ کی پرنٹنگ برانچ نے سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری کو متعلقہ ریکارڈ دینے سے انکار کردیا،  اعتراض میں کہا گیا ہے کہ کسی بھی کیس کا ریکارڈ فریق کے علاوہ کسی دوسرے کو نہیں دے سکتے۔

سپریم کورٹ کی پرنٹنگ برانچ نے سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری کی درخواست پر اعتراض لگادیا، پرنٹنگ برانچ کا کہنا ہے کہ عمران خان کیخلاف توہین عدالت کیس میں سابق چیف جسٹس فریق نہیں تھے، سپریم کورٹ کے رولز کے مطابق متعلقہ دستاویز کی نقول فریق کے علاوہ کسی اور کو نہیں دی جاسکتی۔

پرنٹنگ برانچ نے معاملہ حتمی فیصلے کیلئے رجسٹرار کو بھجوادیا ہے، سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری نے سپریم کورٹ سے توہین عدالت کیس میں عمران خان اور الیکشن کمیشن کے بیانات کی نقول مانگی تھیں، افتخار چوہدری نے عمران خان کو 20 ارب روپے ہرجانے کا نوٹس بھجوا رکھا ہے۔ سماء

october

street

عمران خان

Tabool ads will show in this div