گھریلو جھگڑے پر سفاک باپ نے5ماہ کی بچی سے سانسیں چھین لیں

اسٹاف رپورٹ


اسلام آباد : پانچ ماہ کی ننھی کلی ماں باپ کے جھگڑے کی بھینٹ چڑھ گئی، پولیس کا موقف ہے کہ باپ نے مبینہ طور پر بچی کو زمین پر پھینک کر موت کی نیند سلا دیا۔ ابھی تو معصوم اعزہ نے دنیا کو دیکھنا شروع ہی کیا تھا لیکن مسکراتی آنکھوں سے زندگی کی رنگینیوں سے لطف اندوز ہونے سے قبل ہی وہ منوں مٹی تلے جا سوئی۔

مبینہ طور پر اعزہ کا باپ ارشد مختار ہی اُس کی موت کا ذمہ دار ہے جس نے غصے کی حالت میں اسے زمین پر پٹخ دیا، تاہم اب وہ اس بات سے انکاری ہے' اس کا کہنا ہے کہ بچی بیوی سے چھیننے کے دوران گرنے سے ہلاک ہوئی۔

پولیس تفتیش کے مطابق ملزم نے ہی بچی کو قتل کیا اور اس سے قبل چھری کے ذریعے اپنی بیوی پر حملہ کر کے اسے زخمی بھی کیا۔ ماں باپ کے جھگڑوں سے بے نیاز معصوم اعزہ اب دنیا میں نہیں لیکن اس کی روح ضرور پکارتی ہوگی کہ اس کا قصور کیا تھا کہ اسے زندگی سے ہی محروم کر دیا گیا۔ سماء

کی

پر

سے

spy

Tabool ads will show in this div