پاکستان کی پہلی خواجہ سراماڈل نے فلم نگری میں قدم رکھ دیا

KAMI1

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2016/01/Pakistans-first-transgender-modbut-with-stunning-photoshoot.mp4"][/video]

کراچی: پاکستان کی پہلی خواجہ سرا ماڈل کامی سد نے فلمی سفر کا آغاز بھی کر دیا ہے۔ کامی جلد ہی ایک مختصر فلم ’’رانی‘‘ میں جلوہ گر ہوں گی۔ خواجہ سراؤں کے حقوق کے لیے سرگرم کامی سد نے کچھ عرصہ قبل ریمپ پر واک کر کے خوب توجہ سمیٹی تھی ۔ کامی سد اب جلد ہی بڑے پردے پر بھی دکھائی دیں گی۔

KAMI

فلم رانی میں کامی سد نے خواجہ سرا کا مرکزی کردارنبھایا ہے۔ فلم کے ڈائریکٹر امریکا سے تعلق رکھنے والے حماد رضوی ہیں جبکہ اسے گرے ہاؤس نامی پروڈکشن ہاؤس کی جانب سے پروڈیوس کیا گیاہے۔ فلم کی شوٹنگ گزشتہ سال اکتوبر میں شروع کی گئی تھی۔ تاحال یہ اعلان نہیں کیا گیا کہ اسے ریلیز کب کیا جائے گا۔

KAMI4

کامی سد کے مطابق فلم رانی میں یہ پیغام دیا جائے گا کہ خواجہ سرا بھی زندگی میں بہت کچھ کر سکتے ہیں، ان کا مقصد صرف شادیوں میں رقص کرنا ہی نہیں ہے۔ فلم کی کہانی ایک خواجہ سرا پر مبنی ہےجسے کراچی کی سڑکوں پر کھلونے فروخت کرنے کے دوران ایک روز ایسا بچہ ملا جسے اس کے خاندان والے چھوڑ چکے تھے۔

KAMI3

کامی اسے اپنے گھر لے آتی ہے اور بعد میں انہیں کئی طرح کے مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ سماء

Kami Sid

Pakistan's first transgender model

film rani

Tabool ads will show in this div