سندھ یونیورسٹی کی طالبہ نے ہاسٹل میں خود کشی کرلی

HYD Suicide Pkg 02-01 Ayaz

جامشورو :سندھ یونیورسٹی کے ہاسٹل میں طالبہ نے مبینہ طورپرگلے میں پھندا ڈال کرخود کشی کرلی۔ نائلہ شعبہ سندھی کی پوزیشن ہولڈر طالبہ تھی۔ سندھ یونیورسٹی جامشورو کے ہاسٹل میں رہائش پزیرشعبہ سندھی کی طالبہ گزشتہ رات نے مبینہ طور پر گلے میں پھندا ڈال کر پنکھے سے لٹک کرخود کشی کرلی۔ طالبہ کا پوسٹ مارٹم مکمل ہو گیا۔

ایس ایس پی جامشورو طارق ولایت کے مطابق کرائم سین سےشواہداکٹھےکرلیے گئے ہیں۔ابتدائی تحقیقات کےمطابق خودکشی کےشواہدملےہیں، پولیس نے کمرےکی کھڑکی سےدیکھاتولاش پنکھےسےلٹکی ہوئی تھی۔ یونیورسٹی انتظامیہ نےایس ایچ اوجامشوروکواطلاع دی جس کے بعد پولیس نےہاسٹل پہنچ کرتالاتوڑا۔

اطلاع ملنے پرپولیس نے موقع پر پہنچ کر طالبہ کی لاش کو پھندے سے اتارا اورکمرے کی تلاشی لیکرضروری شواہد اکٹھے کیے۔  ڈی آئی جی حیدرآباد نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے فوری تحقیقات کے احکامات دیے ہیں۔

نائلہ نامی طالبہ کا تعلق قنبر شہداد کوٹ کے رند نامی گاؤں سے ہے۔ یونیورسٹی انتظامیہ نے واقعے پر بات کرنے سے گریزکیا۔

پولیس واقعے کی مزید تحقیقات کر رہی ہے۔ سماء

Sindh university

Tabool ads will show in this div