جمہوریت میں مذاکرات کا راستہ کھلا رکھنا چاہیے، آصف زرداری

اسلام آباد: پيپلزپارٹی کے شريک چئيرمين آصف علی زرداری کا کہنا ہے کہ تھرڈ امپائر کي بات ہوئی تو دور تک جائے گی، جمہوريت ميں مذاکرات کا راستہ کھلا رکھنا چاہيے۔
وزيراعظم سے کہا ہے کہ جتنا پيار سے کام ليا جائے بہتر ہوگا۔ طويل خاموشی اور ايک لمبی چھٹی کے بعد سابق صدر آصف علی زرداری نے ميڈيا کے سامنے چپ کا روزہ توڑ ہی ڈالا۔
لاہور ميں اہم ملاقاتوں کے بعد اولڈ ائرپورٹ پر ميڈيا سے گفتگو ميں آصف زرداری کا کہنا تھا کہ پیپلزپارٹی نے سياسی جماعتوں ميں رابطے کے لیے چار رکنی کمیٹی قائم کی ہے۔ یہ کمیٹی مشاورت کا سلسلہ جاری رکھے گی۔ يہ وقت لڑنے کا نہيں بلکہ قومي مفاد کے تحفظ کا ہے۔
سابق صدر نے ميڈيا کے سوالوں جواب ديتے ہوئے کہا کہ ملک میں انتخابی اصلاحات سميت تمام تبديلياں آئين ميں رہ کر کی جانی چاہيئں۔ کسی بھی حال ميں جمہوريت کوڈی ريل نہيں ہونا چاہيے۔ انہوں نے کہا کہ مذاکرات شروع ہونے پر مطالبات کم ہو جايا کرتے ہيں۔
آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ جمہوری حکومت کو اسٹريٹ پاور کے ذريعے چيلنج نہيں کرنا چاہيے۔ سماء

helps

Tabool ads will show in this div