رحمان بھولا کا عدالت سے شکوہ

REHMAN BHOLA CASE KHI PKG 29-12 MEHROZ

کراچی: سانحہ بلدیہ کے مرکزی ملزم رحمان بھولا کی انسداد دہشتگردی عدالت میں پیشی ہوئی ،ملزم نے جیل میں اہل خانہ سے ملاقات نہ ہونے کا شکوہ کر ڈالا، عدالت نے ملزم کو اسکا جرم یاد دلادیا۔

سانحہ بلدیہ کے مرکزی کردارکو بکتربند گاڑی میں عدالت لایاگیا رحمان بھولا نے انسداد دہشتگردی عدالت میں شکوہ کیا کہ تشدد تو نہیں ہوا لیکن گھر والوں سے ملنے نہیں دیاگیا جبکہ جیل میں الگ سیل میں بند کیا گیا۔

عدالت نے بھی ٹکا سا جواب دے دیا آپ کے جرم کی نوعیت ہی ایسی ہے اہلخانہ سے ملاقات کیلئے متعلقہ عدالت سے رجوع کریں۔ تفتیشی افسرنے متعلقہ جج کی رخصت کے باعث عدالت میں صرف رپورٹ جمع کرائی تھی ملزم کی تاخیر سے پیشی پر عدالت نے برہمی کا اظہار بھی کیا۔ پولیس نے رپورٹ پیش کی کہ ملزم کا دفعہ 164 کے تحت اعترافی بیان قلمبند ہوچکا ہے تاہم ضمنی چالان کے لیے وقت درکار ہے، عدالت نے ملزم کو بارہ جنوری تک عدالتی ریمانڈ پر جیل بھیج دیااور اگلی سماعت پرچالان پیش کرنے کا حکم بھی دیا۔ سماء

rehman bhola

Tabool ads will show in this div